مومن پورہ:پولیس اہلکاروں نے عیدی نہ دینے پر کباڑیئے کو تشدد کر کے ہلاک کر دیا

مومن پورہ:پولیس اہلکاروں نے عیدی نہ دینے پر کباڑیئے کو تشدد کر کے ہلاک کر دیا

  

لاہور (خبر نگار) باغبانپورہ کے علاقہ میں پولیس کے جوانوں نے عیدی نہ ملنے پر تین کم سن بچوں کے باپ کو تشدد کرکے موت کے گھاٹ اتار دیا۔ بتایا گیا ہے کہ مومن پورہ میں 50سالہ عبدالستار نے کباڑ کی دکان بنا رکھی تھی۔ گذشتہ رات وہ اپنی دکان پر موجود تھا کہ تھانہ باغبانپورہ کے چار اہلکار وہاں پر آگئے اس سے عیدی مانگی۔ جس پر عبدالستار نے کہا کہ وہ اپنی دکان پر چوری کا سامان نہیں خریدتا ، کس بات کی عیدی دے جس پر اہلکاروں نے دکاندار عبدالستار کو دکان سے باہر نکال کر تشدد کا نشانہ بنانا شروع کر دیا۔ عبدالستار کی حالت غیر ہوگئی جس پر اہلکار اُسے نیم بے ہوشی کی حالت میں پھینک کر فرار ہوگئے۔ اردگرد کے دکانداروں اور راہ گیروں نے اُسے مقامی ہسپتال لیجانے کی کوشش کی لیکن وہ جانبر نہ ہوسکا اور سر پرشدید ضربیں آنے سے جاں بحق ہوگیا۔ واقعہ کے خلاف دکانداروں اور اہل علاقہ سمیت لواحقین نے پولیس کے خلاف شدید احتجاج شروع کر دیا اورنعرے بازی کی۔ افسوسناک واقعہ کی اطلاع ملنے پر پولیس حکام پر موقع پرپہنچ گئے اور نعش قبضہ میں لیکر مردہ خانہ میں جمع کروادی ۔ مقتول کے بھائی شوکت کے مطابق پولیس حکام اپنے پیٹی بھائیوں کو بچانے کی کوشش کررہے ہیں اور واقعہ کو حادثاتی موت کا رنگ دے رہے ہیں۔ مقتول کے بارے میں بتایا گیا ہے کہ وہ تین کم سن بچوں کا واحد کفیل تھا۔ پولیس نے رات گئے تک کسی قسم کی کارروائی نہیں کی ہے۔

مزید :

علاقائی -