کبوتر کے گوشت سے تیار کی جانے والی ایک ایسی ڈش جس سے پاکستانی لاعلم ہیں

کبوتر کے گوشت سے تیار کی جانے والی ایک ایسی ڈش جس سے پاکستانی لاعلم ہیں
کبوتر کے گوشت سے تیار کی جانے والی ایک ایسی ڈش جس سے پاکستانی لاعلم ہیں

  

لاہور ( حکیم محمد عثمان)کبوتر کا گوشت کئی بیماریوں کا علاج ہونے کے ساتھ ساتھ انتہائی لذیذ ہوتا ہے۔ جنگلی کبوتر کا گوشت زیادہ بہتر ہے۔ شہروں میں پائے جانے والے کبوتروں کا گوشت کھانے سے اجتناب کرنا چاہئے کیونکہ شہروں میں پائی جانے والی آلودگی اور بیماریوں کا وائرس کاسکو متاثر کرتا ہے۔یہ بہترین پروٹین کا خزانہ ہے۔انسانی جسم میں میٹابولزم کی کارکردگی بہتر کرتاہے۔ گرم تر ہوتا ہے‘ جنگلی کبوتر میں رطوبت کم ہوتی ہے البتہ اس کے بچوں میں زیادہ رطوبت ہوتی ہے۔ گھریلو اڑنے کے قابل کبوتر کا گوشت بہت ہلکا ہوتا ہے۔اس میں غذائیت عمدہ ہوتی ہے‘نر کبوتر کا گوشت فالج‘ عضو کی بے حسی‘سکتہ‘ اور رعشہ کے لئے شفاءہے اسی طرح اس کے سانسوںکی بو سونگھنے سے فائدہ ہوتا ہے اور اس کے بچوں کے کھانے سے عورتوں کو جلد حمل قرار پاتا ہے۔کبوتر کا گوشت گردہ کے لئے مفید ہے‘ خون زیادہ کرتا ہے۔

پاکستان میں کبوتر کا گوشت اتنا مقبول نہیں لیکن فرانس،چین،امریکہ سمیت کئی ملکوں میں کبوتر کا گوشت Squab Meat کے طور معروف ہے اور صدیوں سے یہ ڈش مقبول ترین درجہ رکھتی ہے۔یورپ میں Squab Meat باذوق لوگوں کی غذا سمجھی جاتی ہے۔ جبکہ چین میں نیا سال آنے پر اس ڈش کو خاص طور پر بنا کر مہمانوں کو پیش کیا جاتا ہے۔Squab Meat ڈش دراصل خاص قسم کے کبوتر کے چوزے کی قسم سے تیار ہوتی ہے تاہم اب ہر قسم کے کبوتر اس ڈش میں استعمال ہوتے ہیں۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -