حکومت جنوبی پنجاب کے ساتھ سوتیلوں جیسا سلوک بند کرے، شاہ محمود قریشی

حکومت جنوبی پنجاب کے ساتھ سوتیلوں جیسا سلوک بند کرے، شاہ محمود قریشی

  

بہاولپور(اے این این) تحریک انصاف کے وائس چیئرمین شاہ محمود قریشی نے سانحہ بہاولپور میں امدادی کارروائیوں میں تاخیر پر حکومت کو کڑی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ جنوبی پنجاب کے ساتھ سوتیلوں جیسا سلوک بند کیا جائے۔احمد پور شرقیہ میں جائے حادثہ کے دورے کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے امدادی کارروائیوں میں تاخیر پر حکومت پنجاب کو کڑی تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ کیا جنوبی پنجاب کی لاشیں سستی ہیں، اگر فوری امدادی کام ہوتے تو جانی نقصان کم ہوتا۔ ان کا کہنا تھا کہ ضلعی ہیڈکوارٹر ہونے کے باوجود بہاولپور میں ایک برن یونٹ تک موجود نہیں، جنوبی پنجاب کے ساتھ سوتیلوں سلوک بند کیا جائے، یہ علاقہ کل بھی بنیادی سہولیات سے محروم تھا اور آج بھی محروم ہے۔شاہ محمود قریشی نے کہا کہ اگر یہ واقعہ تخت لاہور کے قریب پیش آتا تو پوری حکومتی مشینری جائے وقوع پر پہنچ جاتی اور تمام سہولیات مہیا کی جاتیں، جنوبی پنجاب سے منتخب ہونے والے ارکان اسمبلی کہاں سوئے ہوئے ہیں، جن کے پیارے ہسپتالوں میں زندگی و موت کی کشمکش کا شکار ہیں وہ پوچھ رہے ہیں کہ حکومت کہاں ہے، فوج نہ آتی تو ہلاکتوں میں مزید اضافہ ہو سکتا تھا۔جنوبی پنجاب میں ہسپتالوں کی کمی سے متعلق سوال پر شاہ محمود قریشی نے کہا کہ حکومت کی ترجیح انسانیت اور صحت نہیں بلکہ میٹرو اور اورنج ٹرین ہے۔ انہوں نے کہا کہ تعلیم، صحت اور روزگار حکومت کی ترحیجات میں سرے سے شامل ہی نہیں ہے۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -