دیپالپور:فیکٹری میں ڈکیتی ،مزاحمت پرملازم قتل ، پولیس مقابلہ میں تینوں ڈاکو پار

دیپالپور:فیکٹری میں ڈکیتی ،مزاحمت پرملازم قتل ، پولیس مقابلہ میں تینوں ڈاکو ...

  

دیپالپور(نمائندہ پاکستان)فیکٹری میں دوران ڈکیتی مزاحمت پر ایک شخص قتل اورچارشدید زخمی ہوگئے ، جبکہ عوام نے بہادری کا مظاہرہ کرتے ہوئے فرار ہونے والے ڈاکوؤں میں سے ایک کو پکڑکر پولیس کے حوالے کردیا ،دوسری طرف مقتول کے لواحقین اوراہل علاقے نے مقتول کی نعش مدینہ چوک میں رکھ کر شدید مظاہرہ جبکہ گرفتار ڈاکو کی نشاندہی پر باقی 3 ڈاکوؤں کو پولیس نے مقابلے میں پار کر دیا۔ تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز دیپالپور میں رتہ کھنہ روڈ پر واقع المدینہ سوڈا واٹر فیکٹری میں افطاری سے دس منٹ قبل ایک موٹرسائیکل پر سوار تین مسلح ڈاکو آئے اور ڈکیتی کی کو شش کی مگر فیکٹری مالک اور ملازمین کی مزاحمت پر بوکھلا کر ڈاکوؤں نے اندھا دھند فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں محمد اکرم نامی ایک شخص موقع پر ہی جاں بحق ہوگیاجبکہ فیکٹری مالک چوہدری محمدشکیل اور مختار احمد ولد محمدطفیل،محمدظفرولدفلک شیر،محمدجاویدولد سردار علی اورمحمدسلیم ولد محمدرفیق شدید زخمی ہوگئے جنہیں ٹی ایچ کیو ہسپتال دیپالپور منتقل کیا گیا تاہم نازک حالت کے پیش نظر انہیں جناح ہسپتال لاہور ریفرکردیا گیاہے ، ڈکیتی کے دوران فائرنگ کی آواز سن کر اردگرد سے عوام موقع پر پہنچے اور دلیری کا مظاہرہ کرتے ہوئے ایک ڈاکو شاہد عرف شاہدی گھوڑا کو پکڑکرپولیس کے حوالے کردیا ،ادھر مقتول محمد اکرم کے ورثاء اور سول سوسائٹی نے مقتول کی نعش مدینہ چوک میں رکھ کر شدید احتجاج کیا اور ٹریفک بلاک کردی جس پر ڈی ایس پی مرزاعبدالقدوس بیگ وہاں پہنچے اور ان کی جانب سے ڈاکوؤں کو کیفرکردار تک پہنچانے اور جلد انصاف کی فراہمی کی یقین دہانی کروائی جس پر مظاہرین منتشر ہوگئے ۔قابل غور بات یہ ہے کہ واقعہ تھانہ سٹی دیپالپور کی حدود میں ہوا مگر اس سارے دورانیہ میں ایس ایچ او سٹی رانا مقبول احمد نہ تو جائے واردات پر پہنچے اور نہ ہی مدینہ چوک میں پہنچ کر مظاہرین کی دلجوئی کی ،تاہم ایس ایچ او تھانہ صدر ملک طارق اور ڈی ایس پی مرزاعبدالقدوس بیگ وہاں پر موجود رہے ،یادرہے رانا مقبو ل احمد کی اس سے قبل تعیناتی کے دوران بھی چوری و ڈکیتی کی وارداتیں بہت بڑھ گئی تھیں جن میں ضیالدن کالونی میں باپ بیٹے کا قتل بھی شامل ہے اور اب بھی ان کے دیپالپور میں چارج سنبھالتے ہی دیپالپور میں جرائم کی شرح بہت زیادہ ہوگئی ہے ۔اس اندوہناک واقعے کی اطلاع ملتے ہی ڈی پی او ضلع اوکاڑہ کی خصوصی ہدایات پر ایس ایچ او صدر ملک محمد طارق گرفتار ڈاکو کے انکشافات پر دیگر ساتھیوں فیصل عرف فیصلی ٹھکرکا اور رزاق عرف رزاقی کی نشاندہی کیلئے جارہے تھے کہ سوبھارام پل کے قریب اسکے دیگر ساتھیوں نے اسے چھڑانے کیلئے پولیس پر فائرنگ کردی جس پر پولیس کی جوابی فائرنگ سے فیصل عرف فیصلی اور رزاق عرف رزاقی ہلاک ہوگئے، بعد ازاں پولیس ذرائع نے شاہد عرف شاہدی کے مرنے کی بھی اطلاع دی۔ عوام نے بروقت ایکشن پر ایس ایچ او تھانہ صدرلک طارق ،ڈی ایس پی دیپالپور مرزا عبدالقدوس بیگ اور ڈی پی او حسن اسد علوی کو خراج تحسین پیش کیا ہے۔

دیپالپور ڈکیتی

مزید :

صفحہ آخر -