” جب وہ گرم ہوتے ہیں تو بہت زیادہ گرم ہوتے ہیں اس لیے ۔۔“ نیوزی لینڈ کے کھلاڑی مچل سینٹنر نے پاکستان کو خطرناک قرار دیتے ہوئے اپنی ٹیم کو خبردار کر دیا

” جب وہ گرم ہوتے ہیں تو بہت زیادہ گرم ہوتے ہیں اس لیے ۔۔“ نیوزی لینڈ کے ...
” جب وہ گرم ہوتے ہیں تو بہت زیادہ گرم ہوتے ہیں اس لیے ۔۔“ نیوزی لینڈ کے کھلاڑی مچل سینٹنر نے پاکستان کو خطرناک قرار دیتے ہوئے اپنی ٹیم کو خبردار کر دیا

  


ایجبسٹن (ڈیلی پاکستان آن لائن )نیوزی لینڈ کے کھلاڑی ” مچل سینٹنر “ نے پاکستانی ٹیم کو ” خطرناک “ قرار دیتے ہوئے اپنی ٹیم کو خبردار کر دیاہے ، ان کا کہناتھا کہ پاکستان نے انگلینڈ اور جنوبی افریقہ کو شکست دی ہے ، جب وہ گرم ہوتے ہیں تو بہت گرم ہوتے ہیں ، اسی لیے انہیں ٹھنڈا کرنے کیلئے ہمیں راستہ تلاش کرنا ہو گا ۔

تفصیلات کے مطابق مچل سینٹنر نے کہا کہ نیوزی لینڈ ’ خطرناک ‘ پاکستان کو ہلکا لینے لینے کی گنجائش نہیں رکھتی جیسا کہ وہ آج سیمی فائنل میں رسائی کیلئے مد مقابل ہونے جا رہے ہیں ۔ورلڈ کپ میں اب تک ناقابل شکست رہنے والی نیوزی لینڈ اس وقت 11 پوائنٹس کے ساتھ پہلی پوزیشن پر ہے تاہم آج کا میچ جیتنا پاکستان کیلئے بہت اہم ہے بصورت دیگر پاکستان سیمی فائنل کی دوڑ سے باہر ہو جائے گا ۔

ان کا کہناتھا کہ بے شک پاکستان کا یہاں پر ریکارڈ بہت اچھا ہے ، چند برس قبل انہوں نے یہیں پر چیمپئن ٹرافی جیتی تھی اور انہوں نے جنوبی افریقہ کے خلاف شاندار کامیابی سمیٹی ہے ۔ان کا کہناتھا کہ ہم اس وقت پوائنٹس ٹیبل میں ٹاپ پر ہیں لیکن ہم کسی بھی میچ کو ہلکا نہیں لے سکتے ہیں ۔مچل سینٹنر کی جانب سے پاکستان کے باولنگ اٹیک کی بھی تعریف کی گئی ۔

ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کا باؤلنگ اٹیک مجموعی طورپر اچھا ہے،ان کے پاس بہت اچھے سیم باؤلرز ہیں جبکہ ساتھ ساتھ سپنرز بھی ہیں ، ہمیں ان کی طاقت کا اندازہ ہے اور میرے خیال میں وہاب ریاض کی ٹیم میں واپسی پاکستان کیلئے اچھی ثابت ہوئی ہے۔ان کا کہناتھا کہ محمد عامر نے بہت شاندار باؤلنگ کا مظاہرہ کیا ہے ۔مچل سینٹنر کا کہناتھا کہ پاکستان نے پہلے انگلینڈ کو ہرایا اور پھر جنوبی افریقہ کو شکست سے دو چار کیا ، جب وہ گرم ہوتے ہیں تو بہت گرم ہوتے ہیں ، درحقیقت ہمیں وہ راستہ تلاش کرنا ہو گا جس سے ہم ان کو ٹھنڈا کر سکیں جب وہ اس طرح گرم ہوتے ہیں ۔

مزید : کھیل