معروف خطاط، مصور ومعمار حافظ اقبال بھٹی کا نمازجنازہ ادا، قل خوانی آج ہوگی

  معروف خطاط، مصور ومعمار حافظ اقبال بھٹی کا نمازجنازہ ادا، قل خوانی آج ہوگی

  

ملتان(سٹی رپورٹر)ملتان کے معروف خطاط، مصور و معمار حافظ محمد اقبال بھٹی بقضائے الٰہی وفات پا گئے۔ نماز جنازہ سائیں موتی والا قبرستان 14 نمبر چونگی ملتان میں ادا کی گئی، مرحوم نے اپنے لواحقین میں دو بیٹے محمد بلال (بقیہ نمبر12صفحہ6پر)

شاہد، محمد وقاص مجاہد، پانچ بیٹیاں اور ایک بیوہ سوگوار چھوڑی ہیں۔ مرحوم کی روح کو ایصال ثوب کیلئے قل خوانی 26 جون 2020 ء صبح سات بجے مسجد اویسیہ محلہ رسول پورہ گلی نمبر 1 چونگی نمبر 14 ملتان میں ہوگی۔ نماز جنازہ میں سرائیکستان قومی کونسل کے صدر ظہور دھریجہ سمیت سینکڑوں افراد نے شرکت کی۔ اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے ظہور دھریجہ نے کہا کہ حافظ محمد اقبال بھٹی معروف ماہر لسانیات پروفیسر شوکت مغل مرحوم کے قریبی ساتھی اور دوست تھے۔ پروفیسر شوکت مغل کی وفات سے ان کو شدید صدمہ پہنچا اور وہ صاحب فراش ہو گئے۔پروفیسر شوکت مغل کی کتاب اصطلاحات پیشہ وران میں حافظ محمد اقبال بھٹی کی تصاویر اور معاونت موجود ہے۔ حافظ محمد اقبال بھٹی کے والد مستری عبدالرحمن بھٹی اپنے وقت کے مشہور و معروف معمار تھے اور انکی خدمات بھی بہت عظیم ہیں۔ ظہور دھریجہ نے کہا کہ حافظ محمد اقبال بھٹی کا تعلق ملتان کے عظیم خانوادے سے تھا، ان کے بزرگوں نے تاج محل کی تعمیر میں اپنے فن کے جوہر دکھائے، اسی طرح عالمی ایوارڈ یافتہ مسجد بھونگ اور کہروڑ پکا سمیت وسیب کی تاریخی مساجد کی تعمیر میں اس خاندان کا بہت بڑا ہاتھ ہے۔ دیرہ اڈا ملتان کی ایک مینار والی مسجد حافظ محمد اقبال کے بھائی مستر سعید احمد بھٹی کے عظیم و الشان فن کا منہ بولتا ثبوت ہے۔ اس مسجد مینار کی تعمیر میں حافظ صاحب کی فنی معاونت شامل تھی۔ ظہور دھریجہ نے کہا کہ حافظ محمد اقبال بھٹی عظیم آرٹسٹ ہونے کے ساتھ ساتھ بہت اچھے انسان تھے اور وہ وسیب کی شرافت، دیانت اور امانت کی روایات کے امین تھے۔ حافظ محمد اقبال بھٹی نے ایک بہت بڑا پراجیکٹ شروع کیا ہوا تھا، وہ دیوان فرید کے اشعار کو کلر مصوری میں ڈھال رہے تھے اور کئی سالوں سے انکا کام جاری تھا۔ اسی طرح وہ تاج محل بھی بنا رہے تھے، ان کا کہنا تھا کہ مجھے تاج محل سے دلچسپی اس بناء پر ہے کہ ہمارے بزرگوں نے اس کی تعمیر میں حصہ لیا۔ اس کے علاوہ قرآنی آیات کی خطاطی و مصوری ان کے عظیم کارنامے ہیں۔ حافظ محمد اقبال بھٹی وسیب کا عظیم سرمایہ تھے اور ایسے لوگ روز روز نہیں صدیوں بعد پیدا ہوتے ہیں۔

نمازجنازہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -