کشف بداخلاقی وقتل کیس، ورثاء کاپولیس کے خلاف احتجاجی مظاہرہ

  کشف بداخلاقی وقتل کیس، ورثاء کاپولیس کے خلاف احتجاجی مظاہرہ

  

میاں چنوں،محسن وال (نمائندہ پاکستان، نامہ نگار) 12 سالہ کشف بد اخلاقی و قتل کا معاملہ،مقتولہ کے ورثاء کا پولیس تھانہ چھب کلاں کے خلاف احتجاج،تین گھنٹے تک نیشنل ہائی وے روڈ بلاک،مظاہرین نے الزام عائد کیا ہے کہ پولیس اصل ملزمان کو چھوڑنا چاہتی ہے،تفصیلات کے مطابق میاں چنوں کے نواحی گاؤں 99 پندرہ ایل میں زیادتی کے بعد قتل ہونے والی 12 سالہ کشف کے ورثاء کا علاقہ محسن وال نیشنل ہائی وے روڈ بلاک کرکے شدید احتجاج،(بقیہ نمبر8صفحہ6پر)

مظاہرین نے پولیس تھانہ چھب کلاں کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے الزام عائد کیا ہے پولیس اصل ملزمان کو چھوڑنا چاہتی ہے،ملزمان بااثر ہیں ملزمان نے 12 سالہ کشف کوبد اخلاقی کے بعد قتل کیا ہے،مظاہرین کی جانب سے پولیس کے خلاف شدید نعرے بازی،جبکہ دونوں اطراف سے روڈ بند ہونے سے ٹریفک بری طرح جام ہوگئی،تین گھنٹے تک احتجاج کا سلسلہ جاری رہا،مظاہرین نے توڑ پھوڑ کی،جبکہ پولیس افسران نے متعدد بار مذاکرات کرنے کی کوشش مگر ناکام رہے،احتجاج کے دوران دوسرے شہروں کو جانے والی ٹریفک بری طرح جام رہی،جبکہ تین گھنٹے بعد پولیس کی یقین دھانی پر مظاہرین نے احتجاج ختم کردیا۔

قتل کیس

مزید :

ملتان صفحہ آخر -