سٹیٹ بینک نے مہنگا قرضہ لے کر اگلے ہی روز شرح سود کم کردی، قومی خزانے کو بڑا ٹیکا لگ گیا، ایسا انکشاف کہ پاکستانیوں کو یقین نہ آئے

سٹیٹ بینک نے مہنگا قرضہ لے کر اگلے ہی روز شرح سود کم کردی، قومی خزانے کو بڑا ...
سٹیٹ بینک نے مہنگا قرضہ لے کر اگلے ہی روز شرح سود کم کردی، قومی خزانے کو بڑا ٹیکا لگ گیا، ایسا انکشاف کہ پاکستانیوں کو یقین نہ آئے

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) سٹیٹ بینک آف پاکستان نے شرح سود میں مزید ایک فیصد کمی کردی ہے جس کے بعد یہ 7 فیصد پر آگئی ہے لیکن اس کام سے پہلے بزرجمہروں نے انوکھے طریقے سے قومی خزانے کو کروڑوں روپے کا ٹیکا لگادیا۔

سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے انکشاف کیا ہے کہ 24 جون کو سٹیٹ بینک نے 186 ارب روپے مالیت کے بانڈز فروخت کیے۔ پانچ سالہ مدت کے بانڈز کو 8 اعشاریہ 44 فیصد جبکہ 10 سالہ بانڈز کو 8 اعشاریہ 95 فیصد کی شرح پر بیچا گیا ہے۔

اسحاق ڈار کے مطابق سٹیٹ بینک نے 24 جون کو مہنگے بانڈز فروخت کرنے کے بعد 25 جون کو شرح سود ایک فیصد کم کرکے 7 فیصد کردی۔ اگر حکومت شرح سود میں کمی کے بعد 25 یا 26 جون کو یہ بانڈز فروخت کرتی تو سالانہ ایک ارب 86 کروڑ روپے بچائے جاسکتے تھے۔

مزید :

بزنس -