آسیہ اندرابی نے پاکستانی پرچم لہرا اور قومی ترانہ پڑھ کر کوئی جرم نہیں کیا ،حافظ سعید

آسیہ اندرابی نے پاکستانی پرچم لہرا اور قومی ترانہ پڑھ کر کوئی جرم نہیں کیا ...

لاہور( آئی این پی)مختلف مذہبی، سیاسی و کشمیری جماعتوں کے قائدین نے دختران ملت مقبوضہ کشمیر کی سربراہ آسیہ اندرابی پر یوم پاکستان منانے اور پاکستانی قومی ترانہ پڑھنے کے جرم میں بغاوت کا مقدمہ درج کئے جانے پرشدید ردعمل کا اظہار کیا ہے ۔ امیر جماعۃالدعوۃ حافظ محمد سعید نے کہاہے کہ آسیہ اندرابی نے پاکستانی پرچم لہرا کر اور قومی ترانہ پڑھ کر کوئی جرم نہیں کیا‘یہ ان کا قانونی اور آئینی حق ہے ۔ پاکستان کے حق میں آواز بلند کرنے پر انکے خلاف مقدمہ درج کرنا بدترین ریاستی دہشت گردی ہے۔ انہوں نے کہاکہ بھارت سرکار کا شروع دن سے یہ وطیرہ رہا ہے کہ وہ مقبوضہ کشمیر میں پاکستان کے حق میں اٹھنے والی ہر آواز کو طاقت و قوت کے بل بوتے پر دبانے کی کوشش کرتا ہے۔کبھی کشمیری طلباء پر پاکستانی پرچم لہرانے کے الزامات لگا کر بدترین تشدد کا نشانہ بنایا جاتا ہے‘ یونیورسٹیوں سے زبردستی بے دخل کیا جاتا ہے تو کبھی حریت پسند قائدین پر بے بنیاد مقدمات بناکر جیلوں میں ڈال دیاجاتا ہے۔ایسی مذموم حرکتوں سے کشمیریوں کے حوصلے مزید بلند ہوں گے اور کشمیریوں کی جدوجہد آزادی مزید مضبوط ہو گی۔جنرل (ر) حمید گل نے رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہاہے کہ کشمیریوں کے دل پاکستان کے ساتھ دھڑکتے ہیں۔مظلوم کشمیریوں کی جانب سے یوم پاکستان پر قومی ترانہ پڑھنا اور پاکستانی پرچم لہرانا ایک فطری امر ہے۔ انہوں نے کہاکہ حکومت پاکستان کوآسیہ اندرابی پر مقدمہ درج کرنے کا مسئلہ ضرور اٹھانا چاہیے اور وہ تمام کشمیری حریت پسند جنہیں بغیر کسی جرم کے جیلوں میں ڈال رکھا ہے ان کی رہائی کیلئے بھرپور کردار ادا کرنا چاہیے۔ حریت کانفرنس (گ) آزاد کشمیر کے مرکزی رہنما غلام محمد صفی نے کہاکہ جموں کشمیر کے مسلمان 23مارچ کی طرح جتنے بھی ایام ہیں وہ خصوصی دلچسپی سے مناتے ہیں۔ بھارت اس طرح سے مقدما ت قائم کر کے کتنے لوگوں کو پابند سلاسل کرسکے گا،آسیہ اندرابی کے شوہر پچھلے سترہ برس سے مسلسل جیل میں ہیں ۔ انہوں نے خود بھی قیدوبند کی سختیاں برداشت کی ہیں۔ مسلم لیگ (ض) کے سربراہ اعجاز الحق نے کہاکہ کشمیریوں کی جدوجہد آزادی اور زیادہ مضبو ط ومستحکم ہو گی۔کشمیرپاکستان کی شہ رگ ہے ۔تحریک انصاف کے سینئر نائب صدر اعجاز احمد چوہدری نے کہاکہ آسیہ اندرابی نے پاکستانی پرچم لہرا کر کوئی جرم نہیں کیا۔ کشمیر متنازعہ علاقہ ہے اور مظلوم کشمیریوں کو آزادی اظہاررائے کا پورا حق حاصل ہے۔ امیر جماعت اہلحدیث حافظ عبدالغفار روپڑی، متحدہ جمعیت اہلحدیث کے مرکزی رہنما شیخ نعیم بادشاہ ودیگر نے بھی سیدہ آسیہ اندرابی پر مقدمہ درج کئے جانے کی شدید مذمت کی ہے۔

مزید : صفحہ اول