محکمہ تعلیم نے 64ہزارنئے بھرتی ہونیوالے اساتذہ کی نیند اڑادیں

محکمہ تعلیم نے 64ہزارنئے بھرتی ہونیوالے اساتذہ کی نیند اڑادیں

  

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)محکمہ سکول ایجوکیشن نے 46 ہزار اساتذہ کی بھرتیوں کاعمل روکنے کا نوٹیفکیشن جاری کیا پھر واپس لے لیا ۔ 31 مارچ کو اساتذہ کی نئی تعیناتیوں کے لیٹر زجاری ہونے ہیں ۔تفصیلات کے مطابق محکمہ تعلیم ڈسٹرکٹ پبلک انسٹرکشن نے46ہزار نئے بھرتی ہونیوالے اساتذہ کو اسوقت شدید پریشانی میں مبتلا کر دیا جب محکمہ کی طرف سے تمام سی ای اوز ایجوکیشن کو ایک مراسلہ جاری کیا گیا جس میں ایجوکیٹرز کی بھرتی روکنے کا نوٹیفکیشن جاری کرتے ہوئے تمام اضلاع کو سکول اساتذہ کے جوائننگ لیٹر جاری کرنے سے روک دیا گیا ۔ لیکن بعد میں میڈیا پر خبر آنے کے بعد یو ٹرن لیتے ہوئے نوٹیفکیشن واپس لینے کے احکامات جاری کر دئیے جس سے ہزاروں نئے آنیوالے اساتذہ میں پریشانی کی لہر دوڑ گئی ۔واضح رہے پنجاب بھر کے 46 ہزار اساتذہ کی بھرتیوں کا عمل مکمل ہو چکا ہے اور ان اساتذہ کو 31مارچ17ء کو جوائننگ لیٹرز جاری ہونا ہیں لیکن اچانک محکمہ تعلیم نے بھرتی کا نوٹیفکیشن روکنے کے بعد دوبارہ جاری کرنے سے تمام اساتذہ کو حیران کر دیا ۔اساتذہ تنظیموں نے اس پر ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے محکمہ تعلیم کا نئے آنیوالے اساتذہ کیساتھ اس طرح کا مذاق ناقابل برداشت ہے ۔

مزید :

صفحہ آخر -