کرپٹ اشرافیہ بینکوں کو لوٹ کر دولت لندن، پانامہ اور ملائیشیا میں چھپا رہی ہے: سراج الحق

کرپٹ اشرافیہ بینکوں کو لوٹ کر دولت لندن، پانامہ اور ملائیشیا میں چھپا رہی ہے: ...

  

مردان ( این این آئی) جماعت اسلامی کے مرکزی امیر سینیٹر سراج الحق نے کہاہے کہ ملک کی دو بڑی شخصیات کی بیرونی ملک رکھی گئی دولت پاکستان منتقل کی جائے تو ملک کے سارے قرضے ختم ہو سکتے ہیں۔اشرافیہ بینکوں کو لوٹ کر دولت لندن ،پانامہ اور ملائیشیا میں چھپا رہی ہے ،قوم کے ہاتھوں میں ورلڈ بینک اور آئی ایم ایف کے قرضوں کی ہتھکڑیاں ہیں انہیں توڑنے کے لئے قوم کو جاگنا ہوگا۔وہ ریلوے اسٹیشن گراؤنڈمیں جلسہ عام سے خطاب کررہے تھے دیگر مقررین میں صوبائی امیر مشتاق احمد خان جنرل سیکرٹری عبد الواسع،ضلعی امیر مولانا ڈاکٹر عطاالرحمان ،جنرل سیکرٹری عماد اکبر،تحصیل نائب ناظم مشتا ق سیماب،سیاسی کمیٹی کے چےئرمین سعید اختر ایڈوکیٹ اورالخدمت کے صدر فضل ربانی ایڈوکیٹ شامل تھے۔سراج الحق نے کہا کہ پانامہ کا فیصلہ نہ جانے کب آئے لیکن ہم چاہتے ہیں کہ یہ عوام کے حق میں ہو،بدقسمتی ہوگی کہ لوگ مایوس ہوجائیں اور سڑکوں اور چوراہوں پر نکل کر لٹیروں کا احتساب شروع کردیں۔حکمران اس دن سے ڈریں جب غریب جھونپڑیوں سے نکل کر انکے محلات کا گھیراؤ کریں گے ۔جماعت اسلامی کے امیر نے کہا کہ ماضی میں الیکشن نہیں بلکہ دولت کی بنیاد پر سلیکشن ہوتی رہی اور دولت کے بل بوتے پر کرپٹ اشرافیہ سینٹ اور اسمبلی پہنچتی رہی۔الیکشن کمیشن واضح روڈ میپ دے اور الیکشن اصلاحات کرے بصورت دیگر لوگ سڑکوں پر نکلیں گے۔ انہوں نے کہا کہ عوام روشن پاکستان کی خاطر ووٹ دیتے ہیں لیکن دھاندلی کی وجہ سے اندھیرے انکے نصیب میں ہوتے ہیں ۔قوم کا پیمانہ صبر لبریز ہو چکا ہے اب وہ سلیکشن ماننے کے لئے تیاز نہیں ہے ،اب چاہے کچھ بھی ہو جائے حکمرانوں کو الیکشن کرانا پڑے گا۔سراج الحق نے کہا کہ نئی نسل فنکاروں اور اداکاروں سے نہیں بلکہ مکہ اور مدینہ سے پیار کرتی ہے، وہ ملک کو امریکہ کے وفاداروں اور انکے ایجنٹوں سے نجات دلانے کے لئے کمربستہ ہیں۔طاعوتی قوتیں ہماری بندوق سے نہیں تہذیب سے خوفزدہ ہیں اور اس کے خلاف سازشوں میں مصروف ہیں لیکن دنیا کی کوئی طاقت پاکستان کو اسلامی پاکستان بنانے سے نہیں روک سکتی۔

مزید :

صفحہ آخر -