قائداعظمؒ کا پاکستان کیلئے بنایا گیا سسٹم تباہ ہو چکا ہے: میاں رضا ربانی

قائداعظمؒ کا پاکستان کیلئے بنایا گیا سسٹم تباہ ہو چکا ہے: میاں رضا ربانی

  

کراچی(این این آئی) چیئرمین سینیٹ میاں رضا ربانی نے کہاہے کہ قائداعظمؒ کا پاکستان بنانے کا بنیادی مقصد فلاحی ریاست تھا جوانہوں نے سسٹم بنایا وہ تباہ ہوچکا ہے۔ہم بانی پاکستان کی تعلیمات اور نظریہ کھو چکے ہیں۔ آج ہم فلاحی ریاست کا مقصد نہیں دیکھ رہے، جمہوری حکومت میں آئین کے کردار پر بات ہوتی ہے ۔بدقسمتی سے پاکستان کے جمہوری دور میں وہ ہورہا ہے جو نہیں ہونا چاہئے تھا۔ طلبہ تنظیمیں جلد بحال ہوں گی مجھے اپنے سیاسی کارکن ہونے پر فخر ہے۔ہفتہ کے روز بحریہ یونیورسٹی میں چیئرمین سینیٹ میاں رضا ربانی نے آئینی حکمرانی کی اہمیت پر طلباء سے خطاب کرتے ہوئے کہا قائدا عظم نے جو سسٹم بنایا وہ تباہ ہوچکا ہے، پاکستان کو جس مقصد کیلئے حاصل کیا گیا تھا آج وہ تبدیل ہوچکا ہے، ملک کو آمروں نے نقصان پہنچایا ، مجھے اپنے سیاسی کارکن ہونے پرفخرہے لیکن سیاستدانوں کیخلاف ہمیشہ منفی پروپیگنڈہ کر کے انہیں بدنام کیا گیا کہ وہ کرپٹ ہیں۔ پاکستان میں جو ہونا چاہیے وہ نہیں ہوتا، جمہوری حکومت میں آئین کے کردار پر بات ہوتی ہے، سابق صدرجنرل ضیا الحق نے آئین میں اپنی مرضی کی ترمیم کروائی، اسوقت طلباء تنظیموں، ٹریڈ یونینز اور دانشوروں کو ضیا الحق کے اقتدار میں پابندی کا سامنا رہا جبکہ شعرا اور کافی ہاؤس کلچر پر پابندی لگا کرمذہبی جماعتوں کو آزادی دی گئی۔

مزید :

صفحہ آخر -