شہر سلطان،چوک گوپانگ اور جتوئی روڈ پر غیرقانونی ہاؤسنگ کالونیاں قائم

شہر سلطان،چوک گوپانگ اور جتوئی روڈ پر غیرقانونی ہاؤسنگ کالونیاں قائم

  

بستی اللہ بخش (نامہ نگار) شہرسلطان چوک گوپانگ اور جتوئی روڈ پر غیر قانونی اور غیر رجسٹر ہاؤسنگ کالونیاں قائم۔مالکان کروڑ پتی بن گئے تفصیلات کے مطابق شہرسلطان میں پلاٹوں کی قسطوں سے فروخت 30 ہزار روپے مرلہ کا پلاٹ 3 لاکھ روپے میں فروخت مالکان نے عوام کو دھوکہ دہی (بقیہ نمبر19صفحہ12پر )

دے کر لاکھوں روپے بٹورنے لگے روہیلانوالی کا رہائشی اشرف صائم وغیرہ نے ڈمروالہ روڈ پر سستا رقبہ خرید کر کے بغیر منظور شدہ ہاؤسنگ سکیموں کے نام پر غریبوں کو لوٹنا معمول بنا لیا نہ تو گورنمنٹ کو ٹیکس دیتے ہیں اور نہ ہی غریبوں کو انتقال دیتے ہیں بھاری رقوم بٹور کر لٹو لعل سے کام لیتے رہے ہیں شہریوں نے میڈیا کے نمائندوں کو بتایا ہے کہ رانا اشرف ایک جاگیردار اور دولت مند شخص ہے اس نے شہرسلطان میں خیابان داؤد ہاؤسنگ سکیم کے بڑے بڑے سائن بورڈ آویزاں کر رکھے ہیں جو کہ عوام کو ورغلا کے رقوم بٹورتے ہیں نہ تو ضلعی حکومت مظفرگڑھ سے نقشہ پاس کرایا اور نہ ہی کوئی منظوری لی یہ صرف لوٹ مار کا ڈھونگ ہے جس میں ضلعی حکومت مظفرگڑھ کو لاکھوں روپے کا نقصان ہے ڈپٹی کمشنر مظفرگڑھ فوری طور پر بغیر منظور شدہ ہاؤسنگ سکیموں پلازوں اور پلاٹوں کی روک تھام میں سخت کاروائیاں کر کے غریبوں کو اس ظلم سے بچایا جائے روہیلانوالی کا رہائشی رانا اشرف نے اپنے کارندے رکھے ہوئے ہیں جو کہ عوام کو اپنے جال میں پھنساتے رہتے ہیں کمیشن ایجنٹوں کا تو کمال ہے 30 ہزار روپے کا پلاٹ تین لاکھ میں فروخت غریب لوگ اپنا نقصان کر کے ان کے جال میں پھنس جاتے ہیں رابطہ کرنے پر ایک ایجنٹ نے کہا ہے کہ رانا اشرف ایک دولت مند شخص ہے اور اس کے پاس کالا دھن ہے یہ کسی افسر کو نہیں جانتا اگر کوئی قانونی کاروائی کرنے آیا تو اس افسر کو بھاری بھتہ دے دیتے ہیں جب میڈیا کے نمائندوں نے رانا سرفراز جو کہ سرکاری ملازم ہے تو اس نے بھی غیر قانونی کالونیوں میں بھرپور حصہ لیتا ہے بلکہ ان کے کارندے سارا دن شہر میں پھرتے رہتے ہیں جو کہ غریبوں کو سبز باغ دکھا کر پلاٹوں کی آڑ میں رقوم بٹورتے ہیں ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -