ٹریفک حادثات میں خواتین اور بچے سمیت 6ہلاک، 6شدید زخمی

ٹریفک حادثات میں خواتین اور بچے سمیت 6ہلاک، 6شدید زخمی

  

میلسی،گگومنڈی،گڑھ مہاراجہ،خانیوال،محسن وال(نمائندگان)موٹر سائیکل،موٹر سائیکل رکشوں اور کار سے تصادم کے نتیجہ میں خواتین اور ایک بچے سمیت6افراد جان کی بازی ہارگئے میلسی سے نمائندہ پاکستان کے مطابق دنیا پور کے چکنمبر327 کا رہائشی صاعت علی اپنی اہلیہ رشید ہ(بقیہ نمبر23صفحہ12پر )

بی بی کے ہمراہ بستی عنایتیاں شادی کی تقریب میں شرکت کیلئے جا رہا تھا کہ مدینہ چوک کے قریب ٹریکٹر ٹرالی کو کراس کرتے ہوئے سائیڈ لگنے سے موقع پر ہی جاں بحق ہو گیا جبکہ ان کی اہلیہ رشیدہ بی بی کو شدید زخمی حالت میں تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال میلسی لایا گیا جسے تشویشناک حالت کے پیش نظر وکٹوریہ ہسپتال بہاولپور ریفر کر دیا ۔گگومنڈی سے نامہ نگار کے مطابق نواحی گاؤں 285ای بی کے رہائشی فیصل اور محمد رمضان اپنے دوست شاہ زیب رحمانی سکنہ 219ای بی کے ہمراہ مو ٹر سا ئیکل پر سوار 285ای بی جار ہے تھے جب وہ گنج شکر گھی ملز کے قریب پہنچے تو سامنے سے آنے والے مو ٹر سا ئیکل سے ٹکراکر سڑک پر گر گئے اور اسی اثنا میں وہاں پہنچنے والا تیز رفتارٹرک اُن کے اوپر چڑھ گیا جس کے نتیجہ میں شاہ زیب جا ں بحق اور فیصل اور رمضان شدید زخمی ہو گے حادثہ کے نتیجہ میں رمضان کی ٹا نگ ٹوٹ گی ۔مقامی شہریوں نے متو فی اور زخمیوں کو فوری طور پر ہسپتال پہنچا دیا جبکہ ٹر ک ڈرائیور مو قع پر فرار ہو گیا ۔گڑھ مہاراجہ سے نامہ نگار کے مطابق نواحی علاقہ کوٹ بہادر کا رہائشی پچیس سالہ نوجوان رکشہ ڈرائیور محمد صادق گذشتہ روز گڑھ مہاراجہ موڑ آ رہا تھا جب کوٹ بہادر موڑ پر پہنچا تو اچانک سامنے سے آنے والے ایک تیز رفتار موٹر سائکل سوار نے اسے ٹکر دے ماری جس کے نتیجہ میں رکشہ ڈرائیور اور موٹر سائیکل سوار دونوں شدید زخمی ہو گے جنہیں فوری طور طبی امداد کے لیے مقامی ہسپتال پہنچایا گیا جہاں محمد صادق رکشہ ڈرائیور کو خطر ناک حالت کے پیش نظر نشتر ہسپتال ملتان لے جایا جا رہا تھا کہ وہ رنگ پور کے نزدیک زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے جاں بحق ہو گیا ۔ خانیوال سے نمائندہ پاکستان کے مطابق لاہو رکی رہائشی خاتون اپنے 3سالہ بیٹے سبحان ،دوکمسن بیٹیوں کے ہمراہ ملتان جانے کے لئے بس میں سوار ہوئی مگر بس والوں نے نہیں بتایا کہ وہ صادق آباد جائیں گے اسے خانیوال کا ٹکٹ دے کر168/10-Rچوک میں اتار دیا رہ رکشے پر لاہور موڑ جانے کے لئے سوار ہوگئی جب وہ فضل پارک روڈ پر جارہی تھی کہ اچانک رکشہ سیوریج مین ہول سے ٹکرا گیا اور بچہ تیزی سے اُچھلتا ہوا مین ہول کے کونے سے جاٹکرایا اور موقع پر ہی جاں بحق ہوگیا اس کی ماں کا موبائل مین ہول میں گرگیا اور چیخ وپکار شروع کردی لوگ جمع ہوگئے اور پولیس کو کال کی پولیس خاتون کو بچے کی نعش سمیت پہلے تھانے سٹی لے گئی اور بعدازاں ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال پہنچادیا جبکہ رکشہ ڈرائیور کو پولیس نے گرفتار کرلیا ۔محسن وال سے نامہ نگار کے مطابق محسن وال نیشنل ھائی وے پر یوٹرن لینے والی کار کو پیچھے سے آنے والی تیز رفتار کا ر نے ٹکر مار دی جس کے نتیجے میں تین افراد شدید زخمی ہو گئے اور تین افراد معمولی زخمی ہوئے شدید زخمیوں میں محمدیاسین ، محمد شبیر،عبدالعزیز شدید زخمی ہو گئے جن کو ریسکیو 1122نے ابتدائی طبعی امداد کے بعد سول ہسپتا ل میں چنوں منتقل کر دیا ایک زخمی عبدالعزیز سکنہ 109پندرہ ایل کی حالت تشویشناک ہونے پر نشتر ملتان ریفر کر دیا گیا دوسرے حادثے میں محسن وال میں تیز رفتار بس آگے جاتے ہوئے ٹرالر سے ٹکر گئی جس کے نتیجے میں چار افراد شدید زخمی ہو گئے زخمیو ں میں قیصر عباس،واجد بخش،محبوب،رضوان شدید زخمی زخمیوں کو ریسکیو 1122نے ابتدائی طبی امداد کے بعد سول ہسپتال میاں چنوں منتقل کر دیا۔گڑھ مہاراجہ سے نامہ نگار کے مطابق گڑھ مہاراجہ پتن روڈ ٹال پلازہ کے قریب تیز رفتار ڈالے نے دو موٹر سائیکل سواروں کو ٹکر دے ماری جس کے نتیجے میں موٹر سائیکل سوار دو خواتین 48 سالا حمیدہ،70سالا ہاجرہ 37,سالا اللہ دتہ اور 52سالہ منیر شدید زخمی ہو گے اطلاع ملتے ہی ریسکیو 1122کی ٹیم موقع پر پہنچ گئی اور شدید زخمیوں کو مقامی اسپتال پہنچایا جہاں 2شدید زخمیوں ہاجرہ اور حمیدہ کو خطرناک حالت کے پیش نظر نشتر اسپتال ملتان لے جایا جا رہا تھا کہ وہ راستے میں ہی زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئی متوفیان کا تعلق ایک ہی خاندان سے تھا اور وہ گڑھ مہاراجہ کی نو احی بستی غازی آباد کی رہائشی تھیں جب لاشیں گھر پہنچیں تو علاقہ میں کہرام مچ گیا۔دیگر شدید زخمیوں کو مقامی اسپتال میں طبی امداد پہنچائی جا رہی ہے یاد رہے کہ متوفیان شورکوٹ میں ایک فوتگی میں شرکت کے لیے جا رہے تھے کہ حادثہ کا شکار ہو گئے ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -