سری لنکن ٹیم اور میریٹ ہوٹل پر حملے کا مرکزی ملزم افغانستان میں ڈرون حملے کے دوران مارا گیا : امریکی وزارت دفاع

سری لنکن ٹیم اور میریٹ ہوٹل پر حملے کا مرکزی ملزم افغانستان میں ڈرون حملے کے ...
سری لنکن ٹیم اور میریٹ ہوٹل پر حملے کا مرکزی ملزم افغانستان میں ڈرون حملے کے دوران مارا گیا : امریکی وزارت دفاع

  

واشنگٹن(ڈیلی پاکستان آن لائن )لاہور میں سری لنکن ٹیم پر حملے کا مرکزی ملزم امریکی ڈرون حملے میں مارا گیا ۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق امریکی وزارت دفاع نے تصدیق کی ہے کہ اسلام آباد کے میریٹ ہوٹل کے ماسٹر مائنڈ اور سری لنکن ٹیم پر حملے کا مرکزی ملزم قاری یاسین کو افغانستان میں امریکی ڈرون حملے کے دوران ہلاک کر دیا گیا ہے ۔امریکی وزارت دفاع کا کہنا ہے کہ قاری یاسین درجنوں معصوم افراد کی ہلاکت میں ملوث تھا۔ القاعدہ رہنما قاری یاسین 2008ءمیں اسلام آباد کے میریٹ ہوٹل بم دھماکے کا ماسٹر مائنڈ تھا جبکہ 2009ءمیں لاہور میں سری لنکن ٹیم پر حملے کا مرکزی کردار بھی تھا۔

معروف پاکستانی گلوکار کیخلاف اپنی شادی کی تقریب میں غیر قانونی کام کرنے پر مقدمہ درج، یہ کون ہیں ؟جاننے کیلئے یہاں کلک کریں

پینٹاگون کی طرف سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ القاعدہ رہنما قاری یاسین 19 مارچ کو افغانستان کے صوبے پکتیا میں ڈرون حملے میں مارا گیا۔”قاری یاسین پاکستان میں دہشت گردی کی متعدد وارداتوں میں ملوث تھا۔“

امریکی وزیر دفاع نے کہا ہے کہ قاری یاسین کی موت اس بات کا ثبوت ہے کہ معصوم افراد کو نشانہ بنانے اور اسلام کو بدنام کرنے والے دہشتگرد انصاف سے بچ نہیں پائیں گے۔

یاد رہے2008ءمیں میریٹ ہوٹل اسلام آباد میں ہونے والے دھماکے میں 2 امریکی فوجیوں سمیت درجنوں افراد ہلاک ہو ئے تھے جبکہ 2009ءمیں سری لنکن ٹیم پر ہونے والے حملے میں 6 پولیس اہلکاروں سمیت 8 افراد جاں بحق اور سری لنکن ٹیم کے 6 کھلاڑی زخمی ہوئے تھے۔

مزید :

بین الاقوامی -