نواز شریف کی درخواست ضمانت پر سماعت آج ، نیب نے مخالفت کر دی

نواز شریف کی درخواست ضمانت پر سماعت آج ، نیب نے مخالفت کر دی

اسلام آباد(آئی این پی ،این این آئی) سپریم کورٹ میں سابق وزیراعظم نوازشریف کی درخواست ضمانت پر سماعت(آج) منگل کو ہو گی،سپریم کورٹ نے سکیورٹی کے خصوصی انتظامات کے حوالے سے اعلامیہ جاری کردیا،سپریم کورٹ جانیوالوں کو ا یس پی سکیورٹی سپریم کورٹ سے رابطے کی ہدایت کر دی گئی ۔سپریم کورٹ کی جانب سے جاری اعلامیہ کے مطابق صرف درخواست گزار وں اورمتعلقہ افرادکو سپریم کورٹ جانے کی اجازت ہوگی، (آج) منگل کو سپریم کورٹ میں داخلے کیلئے خصوصی پاسز جاری ہوں گے۔سپریم کورٹ اعلامیہ کے مطابق عدالت آنے والے معمول کے وکلا اورصحافیوں کو خصوصی پاسز سے استثنیٰ ہو گا،عدالت میں موبائل فون لے جانے کی اجازت نہیں ہوگی۔دوسری طرف نیب نے نواز شریف کی درخواست ضمانت کی مخالفت کردی اور اس سلسلے میں اپنا جواب سپریم کورٹ میں جمع کرادیا ہے ۔ جواب میں کہاگیاکہ ضمانت کی درخواست میں جان لیوا بیماری کا کوئی مواد نہیں۔نیب جواب میں کہاگیاکہ نواز شریف کی درخواست ضمانت مسترد کی جائے ۔نیب نے کہاکہ نواز شریف کو ایسا عارضہ نہیں جس سے جان کو خطرہ ہو۔ نیب نے کہاکہ کسی میڈیکل بورڈ نے نواز شریف کی سرجری کی سفارش نہیں کی۔ نیب جواب میں کہاگیاکہ نواز شریف کا ضمانت کا مقدمہ ہارڈ شپ کیس میں نہیں آتا ۔نیب نے کہا کہ نواز شریف کے ڈاکٹر لارنس کی رپورٹ غیر مصدقہ اور خود ساختہ لگتی ہے۔ نیب نے کہاکہ نواز شریف زندگی کو لاحق خطرہ کیس بنا کر بیرون ملک جانا چاہتے ہیں ۔نیب نے کہا کہ نواز شریف کو علاج کی تمام سہولیات دی جا رہی ہے ۔نیب نے کہاکہ ضمانت ملی تو نواز شریف عدالتی حدود سے باہر چلے جائیں گے ۔ نیب نے کہاکہ ہائیکورٹ نے تمام پہلووں کا جائزہ لیکر ضمانت کی درخواست مسترد کی ۔

درخواست ضمانت

اسلام آباد(این این آئی)سابق وزیر اعظم نواز شریف نے سپریم کورٹ میں سزا معطلی کیس میں برطانیہ کے ڈاکٹر لارنس کا خط جمع کرادیا ہے۔میڈیا رپورٹ کے مطابق نوازشریف نے سزا معطلی کیس میں مزید دستاویزات جمع کرا دیں، ان کی جانب سے ایک خط جمع کرایا گیا ہے جو ان کے ذاتی معالج ڈاکٹر عدنان کے نام ڈاکٹر لارنس نے لکھا ہے۔ڈاکٹر لارنس کا لکھا گیا خط نوازشریف کے وکیل خواجہ حارث نے سپریم کورٹ میں جمع کرایا، خط میں نوازشریف کی 2003 سے 2019 تک کی میڈیکل رپورٹس شامل ہیں۔

العزیزیہ ریفرنس

لاہور(کر ائم رپو رٹر ) مسلم لیگ(ن) کے تاحیات قائد میاں نوازشریف کی تمام رپورٹ نارمل ہیں، خطرے والی کوئی بات نہیں، میڈیکل رپورٹ حکومت کو بھجوا دی۔ذرائع کے مطابق جناح ہسپتال کے ڈاکٹرنوید اقبال نے سابق وزیراعظم نوازشریف کی تمام رپورٹس نارمل قراردیدیں، ان کاکہنا تھاکہ خطرے کی کوئی بات نہیں،ڈاکٹروں نے میاں نواز شریف کوپانی زیادہ پینے اورپروٹین والی خوراک کم استعمال کرنے کا مشورہ دیا ہے جبکہ آئی جی جیل خانہ جات نے نوازشریف کی میڈیکل رپورٹ حکومت کو بھجوا دی ۔ذرائع کاکہناتھاکہ سابق وزیراعظم میاں نوازشریف کی صحت کے حوالہ سے شریف خاندان تشویش کاشکارہے مگرحکومت پنجاب کی سب اچھا کی رپورٹ ہے، جیل سپرنٹنڈنٹ نے نوازشریف کی میڈیکل رپورٹ سے متعلق مراسلہ سے محکمہ کو آگاہ کردیا۔

نوازشریف / میڈیکل رپورٹ

مزید : صفحہ اول