میاں منشاء کیطرف سے دائردرخواست پرنیب کا ہائیکورٹ میں جواب داخل

میاں منشاء کیطرف سے دائردرخواست پرنیب کا ہائیکورٹ میں جواب داخل

لاہور(نامہ نگارخصوصی)ممتاز صنعت کارمیاں منشاء کی جانب سے نیب کی کارروائی کے خلاف درخواست پر نیب نے لاہور ہائیکورٹ میں جواب داخل کرا دیاہے ، عدالت نے جواب کی کاپی میاں منشاء کے وکیل کو دینے کا حکم دیتے ہوئے 15 اپریل تک فریقین کے وکلا کو دلائل کے لئے طلب کر لیاہے۔ لاہورہائی کورٹ کے جسٹس ملک شہزاد احمد خان اور جسٹس مرزا وقاص رؤف پر مشتمل بنچ نے کیس کی سماعت کی ،نیب کے پراسیکیوٹر کی طرف سے عدالت کو بتایا گیاکہ میاں منشاء نیب انکوائری میں تعاون نہیں کر رہے ہیں،جس پر فاضل بنچ نے کہا کہ اگر میاں منشاء نیب انکوائری میں شامل نہیں ہوتے تو ان کے خلاف درخواست دائر کر دیں ،درخواست گزار کے وکیل کا موقف ہے کہ نیب کی جانب سے بے بنیاد الزامات پر انکوائری شروع کی گئی ہے، اسلام آباد ہائی کورٹ 22 فروری 2018 ء کو میاں منشاء کے خلاف درخواست مسترد کر چکا ہے، نیب کی جانب سے یکم نومبر 2018 ء برطانیہ میں پارک لین میں سینٹ جیمز ہوٹل کی خریداری کے سلسلے میں انکوائری شروع کی گئی ہے، نیب کی جانب سے سینٹ جیمز ہوٹل کی خریداری کی مکمل منی ٹریل طلب کی گئی ہے، برطانیہ کے سینٹ جیمز ہوٹل کی خریداری کے معاہدے اور قرضوں کی تفصیل بھی نیب نے طلب کی ہے، عدالت سے استدعاہے کہ نیب نوٹسز کالعدم قرا دیئے جائیں، نیب کی کاروائی اختیارات سے تجاوز ہے جسے ختم کرنے کا حکم دیا جائے۔

مزید : صفحہ آخر