معروف ہسپتال کی چھوٹی سی غلطی، کورونا کی مریضہ کو ٹائیفائڈ سمجھ کر بچوں کے وارڈ کے پاس داخل کرلیا، پورے اسلام آباد کی زندگیاں داﺅ پر لگادیں

معروف ہسپتال کی چھوٹی سی غلطی، کورونا کی مریضہ کو ٹائیفائڈ سمجھ کر بچوں کے ...
معروف ہسپتال کی چھوٹی سی غلطی، کورونا کی مریضہ کو ٹائیفائڈ سمجھ کر بچوں کے وارڈ کے پاس داخل کرلیا، پورے اسلام آباد کی زندگیاں داﺅ پر لگادیں

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) خاتون صحافی مونا خان کا کہنا ہے کہ اسلام آباد کے ایف ٹین میں واقع معروف نامی ہسپتال نے کورونا کی مریضہ کو ٹائیفائڈ سمجھ کر 3 روز تک ہسپتال میں رکھا، عملے اور ہزاروں لوگوں کا اس کے قریب سے گزر ہوا جس کے باعث اسلام آباد کے شہریوں کو شدید خطرات لاحق ہوگئے ہیں۔

صحافی مونا خان کے مطابق معروف ہسپتال ایف ٹین کی لاپرواہی اب پورا اسلام آباد بھگتے گا۔ تین روز قبل 18 سالہ لڑکی انفیکٹڈ علامات کے ساتھ معروف اسپتال گئی تو انہوں نے ٹائیفائڈ کاعلاج شروع کر دیا لڑکی کی حالت بگڑنے پر رات کو اسے پمز منتقل کیا گیا اور ٹیسٹ کرنے پر کرونا کی تشخیص ہوئی۔ لڑکی پمز آئسولیشن وارڈ میں زیر علاج ہے۔ سوال یہ ہے کہ تین دن لڑکی معروف اسپتال رہی ہے وہاں ہزاروں لوگ آتے ہیں جن کو وائرس لگ چکا ہو گا۔معروف کا عملہ بھی متاثر ہوا ہوگا کیونکہ وہ اس کو ٹائیفائڈ مریض سمجھے۔ متاثرہ لڑکی کے ساتھ والے کمرے میں نوزئیداہ بچوں کا وارڈ ہے۔

مونا خان نے کہا’ ضرورت ہے کہ بغیر تاخیر کے معروف اسپتال کے عملے اور موجود مریضوں کے ٹیسٹ کیے جائیں ورنہ پورا اسلام آباد کرونا زدہ ہو جائے گا، انتظامیہ اور پولیس نوٹس لے۔ ‘

مزید : علاقائی /اسلام آباد