بھارت سچا ہے تو آزادمبصرین کو کشمیرجانیکی اجازت دے،طاہر اشرفی 

 بھارت سچا ہے تو آزادمبصرین کو کشمیرجانیکی اجازت دے،طاہر اشرفی 

  

 اسلام آباد (این این آئی)چیئرمین پاکستان علما کونسل و نمائندہ خصوصی وزیر اعظم پاکستان برائے بین المذاہب ہم آہنگی و مشرق وسطیٰ حافظ محمد طاہر محمود اشرفی نے بھارتی وزارت خارجہ کی جانب سے اوآئی سی کے خلاف پروپگنڈہ کو عالم اسلام کی توہین قراردیتے ہوئے اسکی شدید الفاظ میں مذمت کی اور واضح کیا ہے کہ اگر بھارت سچا ہے تو آزادمبصرین کو مقبوضہ کشمیر میں دورے کی اجازت دے،آج عالم اسلام پاکستان کی خارجہ پالیسی اور خاص طور پر وزیر اعظم عمران خان کے اسلام فوبیا کیخلاف اقدامات کو خراج تحسین پیش کررہاہے اوآئی سی اور سعودی عرب کل بھی مسئلہ کشمیر پر پاکستان کیساتھ کھڑے تھے اور آج بھی پاکستانی موقف کیساتھ کھڑے ہیں،رواں سال جولائی میں امام کعبہ،شیخ الازہر اور پاپ فرانسس پاکستان کا دورہ کریں گے 70سال پاکستان کی مذہبی سیاسی جماعتیں نفاذ اسلام کی باتیں کرتی رہی جبکہ وزیر اعظم نے ریاست مدینہ طرز کی ریاست بنانے کیلئے عملی اقدمات اٹھائے تاہم موجودہ حالات کے تناظر میں پاکستان کی ریاست کو مدینہ طرز کی ریاست کہنا درست نہیں ہے اگر پاکستان میں ریاست مدینہ طرز پرنظام احتساب اورنظام انصاف کا قیام ہوجائے تو ریاست مدینہ کا قیام بھی ممکن ہو گا ان خیالات کا اظہار انہوں نے سیرت اکیڈمی قرآن کمپلیکس میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا اس موقع پر پاکستان علماء کونسل کے رہنما مولانا اسلم صدیقی،مولانا مفتی نسیم،مولانا عبدالغفار،مولانا کفایت اللہ،مولانا مبشر رحیمی،مولانا عبدالرحیم شاہ سمیت دیگر علماء کرام کی بڑی تعداد بھی موجود تھی۔انہوں نے کہاکہ میری بحثیت چیئرمین پاکستان علماء کونسل اپوزیشن اور حکومتی کارکنوں کو درخواست ہیں کہ وہ 26مارچ سے جاری ریلیوں اور جلسوں میں تصادم اور تشدد سے پرہیز کریں ایک دوسرے کو احترام دیں اورعدم اعتماد کے معاملے پر پارلیمنٹ کو اپنا کام کرنے دیں۔

طاہر اشرفی 

مزید :

صفحہ آخر -