پشاور میں ہسپتالوں کو جدید ترین طبی سہولیات فراہم کرنے کا فیصلہ 

پشاور میں ہسپتالوں کو جدید ترین طبی سہولیات فراہم کرنے کا فیصلہ 

  

       پشاور(سٹاف رپورٹر)خیبر پختونخوا کے وزیر برائے صحت و خزانہ تیمور سلیم جھگڑا کی  زیرصدارت اجلاس کا انعقاد ہوا جس میں وزیر برائے اعلیٰ تعلیم کامران خان بنگش بھی موجود تھے۔اجلاس میں پشاور میں ہسپتالوں کو جدید ترین طبی سہولیات کی فراہمی  سے متعلق اہم فیصلے کئے گئے اس حوالے سے خیبر پختونخوا کے وزیر برائے اعلی تعلیم کامران خان بنگش نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کے وژن کے مطابق اور وزیر اعلیٰ محمود خان کی قیادت میں عوام کو بہترین طبی سہولیات فراہم کی جا رہی ہیں حلقہ پی کے 77  پشاورکے عوام کو بہترین طبی سہولیات دی جا رہی ہیں۔ نشترآباد ہسپتال نہ صرف کوویڈ کے لیے مخصوص رہے گا بلکہ ہیپاٹولوجی اور چھاتی کے کینسر کی اسکریننگ کی سہولیات بھی فراہم کرے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ صفت غیور چلڈرن ہسپتال کو مزید فعال بنانے کیلئے 60 ملین روپے خرچ کئے جائینگے۔    جس میں ہسپتال میں پانی کی نکاسی کا مسئلہ حل کرنے کے لیے 35 ملین روپے مختص کئے گئے۔ کامران خان بنگش کا کہنا تھا کہ اسی طرح میٹرنٹی ہسپتال ہشت نگری کو اپگریڈ کرنے کے لیے 25 ملین روپے فراہم کئے گئے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ ان ہسپتالوں سے روزانہ لاکھوں لوگ مستفید ہونگے۔  اسی طرز پر پی کے 77 کے باقی ہسپتالوں کی بہتری اور فعالی کیلئے بھی منصوبہ بندی کی جا رہی ہے۔ کامران بنگش نے کہا کہ حلقہ پی کے 77  پشاورکی بہتری کے لئے انقلابی اقدامات اٹھائے جا رہے ہیں۔

مزید :

صفحہ اول -