پشاور میں عید کی خریداری‘ لوگوں نے مارکیٹوں کا رخ کر لیا

پشاور میں عید کی خریداری‘ لوگوں نے مارکیٹوں کا رخ کر لیا

  

پشاور (آن لائن)صوبائی دارلحکومت پشاور میں عید کی تیاریوں کا آغاز ہو گیا ہے شام کے بعد خواتین اور مرد عید کی خریداری کے لئے بازاروں کا رخ کر لیتے ہیں خواتین نے ونڈ و شاپنگ شروع کر رکھی ہے عید کی آمد سے قبل نت نئے فیشن اپنانے کے لئے ملبوسات، جوتوں کی دکانوں کے چکر لگا رہے ہیں۔ خواتین ارزاں نرخوں اور منفرد اور بہترین کپڑوں کی خریداری کے لئے بازاروں میں موجود نظر آتی ہیں۔ جبکہ درزیوں کے ساتھ بھی ہر جوڑے کے فیشن کی تفصیلات ترتیب دے رہی ہیں۔ خواتین ایک جانب سے درزیوں سے من پسند ڈیزائن کے کپڑے سلوا رہے ہیں دوسری طرف سلائی کی زیادہ قیمتوں کے باعث نالاں بھی ہیں۔ در زیوں کا موقف ہے کہ سادہ لبا س کی تیاری میں آسانی ہوتی ہے اس لئے ان کے نرخ کم لگائے جاتے ہیں تاہم زیادہ ڈیزائن اور سٹائلش کپڑیوں میں محنت زیادہ کرنا پڑتی ہے اس لئے اس کی سلائی کی قیمت بھی زیادہ لگائی جاتی ہیں۔ شہر کے اکثر بازاروں میں تاجروں نے خواتین کے ملبوسات کے نئے ورائٹی بھی پیش پیش کر رہے ہیں تاہم عید کے کئی روز کی دوری کے باعث خواتین مہنگے ملبوسات خریدنے کے بجائے مہنگائی کے باعث ان کے ریٹس کم ہونے کے انتظار کر رہے ہیں جبکہ مزید نئے ڈیزائن آنے کی امید پر بھی بیٹھی ہیں جوتوں کی خریداری کامرحلہ ملبوسات کے بعد ہی آئیگا تاہم خواتین پھر بھی جوتوں کی دکانوں پر جا کر نئے ڈیزائن دیکھنے کا موقع ہاتھ سے جانے نہیں دیتی۔ ملبوسات کی خریداری کے ساتھ ہی میچنگ جوتے خریدے جائینگے۔

جس کے بعد مہندی او رچوڑیوں کی خریداری کا مرحلہ آئیگا۔ شاہین بازار، مینا بازار، کریم پورہ، چوک شادی پیر، گورا بازار، سمیت خواتین کے مختلف بازاروں میں رش بڑھ گیا ہے۔ رش کے باعث خواتین کو بھی مشکلات کاسامنا کرنا پڑ رہاہے جبکہ تاجروں نے عید کی آمد کے باعث تجاوزات بھی کھڑا کرنا شروع کردی ہیں۔

مزید :

کامرس -