صوابی میں دفعہ 144 کا نفاذ پٹاخوں اور آتش بازی کی فروخت پر پابندی

صوابی میں دفعہ 144 کا نفاذ پٹاخوں اور آتش بازی کی فروخت پر پابندی

  

صوابی( بیورورپورٹ) صوبہ خیبر پختونخوا حکومت کی جانب سے کھلونہ نما اسلحہ ، پٹاخوں اور آتش بازی کی خرویدو فروخت پر دفعہ 144کے تحت پابندی لگا نے کے اعلان کے بعد ضلع صوابی کی پولیس نے اس کے خلاف کریک ڈاﺅن شروع کر دیا اس سلسلے میں ڈی پی او صوابی سید خالد ہمدانی کی نگرانی میں ضلع بھر کی پولیس نے باقاعدہ کارروائیوں کا آغاز کر دیا۔ڈی ایس پی سرکل صوابی خالد خان ، ایس ایچ او اورنگ زیب خان اور انچارج پولیس چوکی منصوری وقاص خان کی قیادت میں پولیس نے بھاری مقدا ر میں کھلونہ نما اسلحہ ، آتش بازی اور پٹاخیں بر آمد کر کے ملزمان کے خلاف مقدمات درج کر کے تفتیش شروع کر دی ہے اسی طرح چاند رات کے موقع پر ضلع بھر میں ہوائی فائرنگ پر مکمل پابندی لگا دی گئی ہے پولیس آفسران نے اس موقع پر بچوں کے والدین سے اپیل کی کہ وہ اپنے بچوں کو کھلونہ نما اسلحہ ، پٹاخوں اور دیگر آتش بازی خریدنے سے باز رکھیں کیونکہ یہی کھلونہ نما اسلحہ سے بچوں کے مستقبل پر بہت بُرا اثر پڑ رہا ہے۔ کیونکہ پلاسٹک نما اس کھلونے اسلحے اور عام اسلحوں میں کوئی فرق نہیں جب ہمارے بچے اس کھلونہ نما اسلحے کے کھیلنے سے ان کا رجحان اصلی اسلحے کی طر ف بڑھ جاتا ہے اور اس کا ان بچوں کے مستقبل پر خطر ناک اثر پڑیگااسی طرح عید الفطر کی آمد کے موقع پر ہوائی فائرنگ بھی کئی قیمتی جانوں کے ضیاع کا سبب بن سکتا ہے لہٰذا ہوائی فائرنگ سے ہر حالت میں اجتناب کیا جائے ورنہ پکڑنے والوں کے خلاف سخت قانونی کارروائی کر کے پابند سلاسل کیا جائیگا اسی طرح ضلع بھر میں کھلونہ نمااسلحے ، پٹاخوں اور دیگر آتشی مواد کے خریدو فروخت پر بھی مکمل پابندی ہے لہٰذا والدین اپنے بچوں کو اس کے خریدنے سے دور رکھیں #

مزید :

پشاورصفحہ آخر -