طیارہ گرنے سے جو گھر تباہ ہوئے ان کو معاوضہ دیا جائے گا یا نہیں ؟ جانئے

طیارہ گرنے سے جو گھر تباہ ہوئے ان کو معاوضہ دیا جائے گا یا نہیں ؟ جانئے
طیارہ گرنے سے جو گھر تباہ ہوئے ان کو معاوضہ دیا جائے گا یا نہیں ؟ جانئے

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن )کمشنر کراچی افتخار شلوانی نے طیارہ گرنے کے باعث نقصان پہنچنے والے گھروں کو معاوضے کی ادائیگی سے متعلق مثبت جواب دیاہے اور کہاہے کہ حتمی جائزہ رپورٹ اس کی تفصیلات کا تعین کرے گی ۔

ڈان نیوز کی رپورٹ کے مطابق ماڈل کالونی میں جمعے کے روز پاکستان انٹرنیشنل ائیرلائن جہاز کو پیش آنے والے حادثے کے نتیجے میں مکانات کو پہنچنے والے نقصان کا اندازہ لگانے کے لیے 19 گھروں کا جائزہ لیا گیا جن کا ڈھانچہ اس حادثے کی وجہ سے بری طرح متاثر ہوا۔ کمشنر کراچی افتخار احمد شلوانی نے بتایا کہ ان کی تشکیل دی گئی کمیٹی نے سروے کیا اور یہ کام مکمل کرلیا گیا ہے۔ان سے جب متاثرہ گھروں کو معاوضے کی ادائیگی کے بارے میں سوال کیا گیا تو انہوں نے اس کا مثبت جواب دیا ساتھ ہی ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ حتمی جائزاتی رپورٹ اس کی تفصیلات کا تعین کرے گی۔

کمشنر کراچی ان کا مزید کہنا تھا کہ ’کوئی گھر مکمل طور پر تباہی کا شکار نہیں بنا اور 15 گھروں کے کچھ حصوں کو نقصان پہنچا ہے۔انہوں نے مزید بتایا کہ زیادہ تر کیسز میں گھروں کا بالائی حصہ متاثر ہوا جہاں ان کا تعمیراتی ڈھانچہ تباہ ہونے والے جہاز سے ٹکرایا تاہم خوش قسمتی سے مکانات کا اسٹرکچر سلامت ہے۔ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ ماڈل کالونی کے اسی علاقے کی میں کچھ گاڑیاں بھی کھڑی تھیں جہاں جہاز تباہ ہوا اور ٹیم اپنی رپورٹ تیار کرتے ہوئے ان کی تفصیلات بھی حاصل کررہی ہے۔

اس سلسلے میں وزیر ہوابازی غلام سرور خان نے طیارے کے حادثے میں جاں بحق ہونے والے تمام مسافروں کے اہلِ خانہ کو فی مسافر 10 لاکھ روپے دینے کا اعلان کیا تھا۔کراچی میںمتاثرہ علاقے کا دورہ کرنے کے بعد انہوں نے کہا تھا کہ 'ہم ابھی دیکھ کر آئے ہیں کافی مکانات کو نقصان پہنچا ہے اور یہ بھی دیکھا ہے کہ وہاں کے باسیوں کی کافی گاڑیوں کو بھی نقصان پہنچا، اس سلسلے میں ابتدائی جائزے کا حکم دیا گیا ہے اور دیکھا جائے گا کہ ہر گھر کی مرمت اور بحالی پر جتنا خرچہ ہوگا وہ حکومت وقت بردشت کرے گی۔

مزید :

قومی -