کیا نواز شریف اور مریم نواز پر کوئی دباو ہے ؟خواجہ آصف نے حیران کن جواب دے دیا

کیا نواز شریف اور مریم نواز پر کوئی دباو ہے ؟خواجہ آصف نے حیران کن جواب دے دیا
کیا نواز شریف اور مریم نواز پر کوئی دباو ہے ؟خواجہ آصف نے حیران کن جواب دے دیا

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان مسلم لیگ نون کے رہنما خواجہ آصف نے کہا ہے کہ مریم نواز اور نواز شریف پر کوئی دباو¿ نہیں ہے،پارٹی بالکل فعال ہے اور میاں نواز شریف کی ہدایت کے مطابق کام کررہے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ جو فیصلے لئے جاتے ہیں،میاں نوازشریف کواعتماد میں اور ان کی رہنمائی میں کئے جاتے ہیں،جب میاں نوازشریف چاہیے گے،مریم نواز متحرک ہوجائیں گے۔

نجی نیوز چینل سما سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ پاکستان ریلوے اب شیخ رشید کے پاس نہیں ہے،وہاں توکوئی ریٹائر فوجی آگیا ہے،عمران خان کوسلیکٹیٹ اس لئے کہتے ہیں کہ 2018 کے انتخابات شفاف نہیں ہوئے،جب ووٹ کا احترام نہ کیا گیا توپھرحکمران سلیکٹڈ ہوتے ہیں،الیکٹیڈ نہیں ہوتے۔ خواجہ آصف نے کہا کہ ہمارا بالکل اسٹبلشمنٹ کے ساتھ کوئی رابطہ نہیں ہے،میڈیا پر لوگ سیاست کرتے رہتے ہیں،سیاست ہماری اپنے قومی مفادات کے تابع ہے،ہمارے کوئی ذاتی مفادات نہیں ہیں،ہمیں اقتدار کی اتنی بے تابی نہیں ہے کہ ہم خفیہ رابطے کریں، ہم قیدوبند کی صوبتیں برداشت کررہے ہیں۔

خواجہ آصف نے مزید کہا کہ میاں شہباز شریف کی پالیسی بھی نواز شریف کے تابع ہے،نوازشریف جمہوریت کی جدوجہد لڑنے کو تیار ہیں،پاکستان مسلم لیگ سیاسی پارٹی ہے اور سیاسی پارٹی میں دھڑے بندیاں ہوتیں ہیں،اختلاف پارٹی کا حسن ہوتے ہیں۔ اپنے متعلق خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ نوازشریف کے ساتھ ہوں اورمیری شناخت نواز شریف کے ساتھ ہے۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ وزیراعظم عمران خان کراچی میں طیارہ حادثے پر مستعفی ہوں،عمران خان اپنے ایک بیان کی بھی پاسداری نہی کر رہے،ان کی حکمرانی اوراپوزیشن کی سیاست جس طرح سیاہ اور سفید میں فرق ہوتا ہے اس طرح ہے

مزید :

قومی -