خاتون نے پولیس اہلکار کو گندی گالیاں دینے کے تمام ریکارڈ توڑ ڈالے ،پھر اہلکار نے کیا کیا ؟ ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل 

خاتون نے پولیس اہلکار کو گندی گالیاں دینے کے تمام ریکارڈ توڑ ڈالے ،پھر ...
خاتون نے پولیس اہلکار کو گندی گالیاں دینے کے تمام ریکارڈ توڑ ڈالے ،پھر اہلکار نے کیا کیا ؟ ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل 

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )سابق وزیراعظم عمران خان اپنا لانگ مارچ ڈی چوک میں پہنچنے کے بعد ختم کرنے کے بعد واپس روانہ ہو گئے ہیں جبکہ حکومت نے اسے روکنے کیلئے بھر پور کوشش کی اور بھاری تعداد میں شہروں کے داخلی اور خارجی راستوں پر نفری تعینات کی گئی ، لاہور سمیت متعدد مقامات پر تحریک انصاف کے کارکنوں اور پولیس کے درمیان تصادم بھی دیکھنے کو ملا ۔

سوشل میڈیا پر متعدد ویڈیو وائرل ہو رہی ہیں جن میں سے ایک ویڈیو ایسی بھی ہے جسے دیکھ کر آپ پولیس اہلکار کے ضبط اور تربیت پر عش عش کر اٹھیں گے ، سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ویڈیو میں دیکھا جا سکتاہے کہ کالے رنگ کے برقعے میں ملبوس خاتون مسلسل نوجوان پولیس اہلکار کے پیچھے چلتی ہوئی آ رہی ہے اور انگریزی زبان میں انتہائی غیر اخلاقی گالیاں دے رہی ہے جبکہ پولیس اہلکار خاموشی سے آگے بڑھتا جارہاہے ۔ دلچسپ امر یہ ہے کہ پیچھے پیچھے آنے والی ایک اور خاتون نے اس کی منظر کشی کی اور خاتون سے سوال بھی پوچھا کہ کیا آپ تحریک انصاف سے ہیں ؟ خاتون نے پولیس اہلکار کو گالیاں دینے کا سلسلہ روکا اور کہا کہ ” میں تحریک انصاف سے نہیں ہوں “ ۔ یہ کہنے کے بعد وہ دوبارہ گالیاں دینے میں مصروف ہو گئیں ۔ویڈیو بنانے والی خاتون نے کہا کہ پھر آ پ لوگ کہتے ہیں کہ پولیس خواتین کے ساتھ بدتمیزی کرتی ہے ۔

یہ ویڈیو سینئر صحافی روف کلاسرانے بھی شیئر کی اور ساتھ اپنے جذبات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ” کسی اچھے گھر کا فرد ہے۔ اچھے ماں باپ کی تربیت تھی کہ عورت پر ہاتھ نہیں اٹھایا۔ اس پولیس نوجوان نے اس خاتون کی مسلسل بدتمیزی کے جواب میں جو صبر دکھایا وہ قابل دید ہے ورنہ خاتون نے کسر نہ چھوڑی تھی۔“

مزید :

قومی -