استنبول میں آپریشن، داعش کا سربراہ گرفتار، ترک صدر کی طرف سے جلد اعلان متوقع

استنبول میں آپریشن، داعش کا سربراہ گرفتار، ترک صدر کی طرف سے جلد اعلان متوقع
استنبول میں آپریشن، داعش کا سربراہ گرفتار، ترک صدر کی طرف سے جلد اعلان متوقع
سورس: Wikimedia Commons

  

استنبول (ڈیلی پاکستان آن لائن) ترک حکام  نے دعویٰ کیا ہے کہ عالمی دہشت گرد تنظیم داعش کے نئے سربراہ کو ایک چھاپے کے دوران استنبول سے گرفتار کرلیا گیا ہے۔

سٹریٹس ٹائمز کے مطابق  ترک کی اینٹی ٹیرارزم پولیس اور انٹیلی جنس ایجنٹس نے  کارروائی کے دوران استنبول سے ایک ایسے شخص کو گرفتار کیا ہے جس کے بارے میں یقین ہے کہ وہ داعش کے سربراہ کی فروری میں شام میں ہلاکت کے بعد گروہ کی قیادت کر رہا تھا۔  ترکی کے ایک اعلیٰ عہدیدار نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ گرفتار شخص کی شناخت ابوالحسن القریشی کے نام سے ہوئی ہے۔

ترکی کے صدر رجب طیب اردگان کو اس معاملے پر پیشرفت سے آگاہ کردیا گیا ہے، وہ آئندہ چند روز میں اس حوالے سے اعلان کریں گے۔  ترک عہدیدار نے بتایا کہ پولیس کی جانب سے طویل عرصے سے اس گھر کی نگرانی کی جا رہی تھی جہاں داعش کا سربراہ چھپا ہوا تھا۔ چھاپے کے دوران پولیس نے کوئی گولی نہیں چلائی ۔ 

مزید :

Breaking News -بین الاقوامی -