اراضی ریکارڈ سنٹرز میں قائم وزٹنگ ایریا میں ناقص میٹریل کے استعمال کا انکشاف

اراضی ریکارڈ سنٹرز میں قائم وزٹنگ ایریا میں ناقص میٹریل کے استعمال کا انکشاف

  



لاہور(عامر بٹ سے) پنجاب لینڈ اتھارٹی کے زیر نگرانی اراضی ریکارڈ سنٹرز میں قائم کئے جانے والے وزٹنگ ایریا کا شرائط نامہ بھی سامنے آ گیا وزٹنگ ایریا میں استعمال کئے جانے والے ناقص میٹریل اور طے شدہ پالیسی سے برعکس اشیاء کی تیاری نے کاغذی کارروائی کا بھی بھانڈا پھوڑ دیا محکمہ اینٹی کرپشن نے بھی تحقیقات کا دائرہ کار وسیع کر دیا۔ روزنامہ پاکستان کو ملنے والی معلومات کے مطابق صوبے بھر کے اراضی ریکارڈ سنٹر میں قائم کئے جانے والے وزٹنگ ایریا میں لگائے جانے والے سامان میں غبن کی اطلاعات پر جہاں محکمہ اینٹی کرپشن حرکت میں آ چکا ہے وہاں وزٹنگ ایریا کی تیاری کے دوران کاغذوں اور پالیسی میں تحریر کی جانے والی کارروائی کی برعکس سامان کی تیاری کروائی گئی وزٹنگ ایریا کی تیاری کے دوران جو قواعد و ضوابط بنائے گئے تھے ان پر 100فیصد عمل درآمد نہیں کیا گیا ہے جن کی چھ ماہ میں ہی حالت اتنی خراب ہو چکی ہے۔ روزنامہ ’’پاکستان‘‘ نے پنجاب لینڈ ریکارڈ اتھارٹی کا وزٹنگ ایریا کے قیام کے دوران جو طریقہ کار تحریری طور پر بنایا گیا تھا حاصل کر لیا ہے ۔حسنین عباس ڈپٹی ڈائریکٹر (سول ورکس)محمد وقاص امین سب انجینئرمحمد اظہر جاوید سب انجینئرتاہم پی ایل آر اے کے شعبہ ورکس کی جانب سے بھیجے گئے اس مراسلے پر بھی عمل درآمد نہ کئے جانے اور فنڈز کو فوری ریلیز کرنے پر پنجاب لینڈ ریکارڈ اتھارٹی کی انتظامیہ میں بھی تحفظات مانے جا رہے ہیں۔

دوسری جانب محکمہ اینٹی کرپشن نے بھی تحقیات کے دائرہ کار کو مزید وسیع کر دیا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...