جعلی انتقال ، کروڑوں کی جائیداد یں ہتھیانے والے پٹواریوں کیخلاف شکنجہ تیار

جعلی انتقال ، کروڑوں کی جائیداد یں ہتھیانے والے پٹواریوں کیخلاف شکنجہ تیار

  



مظفرگڑھ (سٹی رپورٹر) روہیلانوالی کے چاہ نون محل کھاکھی کی رہائشی خاتون آمنہ بی بی نے ڈائریکٹر انٹی کرپشن ڈیرہ غازی خان سرکل کو دی جانے والی درخواست میں موقف اختیار کیا ہے کہ اس کا شوہر بیرون ملک مزدوری کے لئے گیا ہوا ہے جبکہ پٹواری محمدرفیق عرف رفیع نون نے اپنے ساتھی پٹواری ضیاء الرحمٰن کے ساتھ مل کر اس کے ملکیتی مکان برقبہ 13مرلہ کا دھوکہ اور فراڈ کے ذریعے جعلی (بقیہ نمبر35صفحہ12پر )

و فرضی انتقال 6723کا پرت تیار کر کے سیف الرحمٰن کو بھاری رشوت کے عوض دے دیا ہے اور اپنے اختیارات کا ناجائز فائدہ اٹھایا ہے جبکہ مذکورہ دونوں پٹواریوں نے رشوت کا بازار گرم کر کے کروڑوں روپے کے اثاثہ جات بنا رکھے ہیں اور ان کاکام بیوہ ' یتیم بچوں کی کروڑوں روپے کی جائیدادیں ہڑپ کرنا ہے اور یہ مکمل گروہ ہے انٹی کرپشن نے درخواست پر تحقیقات کا آغاز کر دیا ہے اور شکنجہ تیار کیا گیا ہے یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ اس سے قبل بھی ایک شبیر نامی پٹواری کو جعلی و فرضی انتقالات پر گرفتار کیا جا چکا ہے اس ضمن میں متاثرہ خاتون آمنہ بی بی نے صحافیوں کو بتایا کہ اسکی ملکیتی و مقبوضہ 13مرلہ سکنی جائیداد پر سرغنہ پٹواری رفیق کی نگاہ تھی تاہم اب جائیداس ہتھیانے کے لئے اوچھے ہتھکنڈے استعمال کر رہا ہے اور مجھے غنڈوں کے ذریعے بیدخلی کے لئے ہراساں کر رہا ہے متاثرہ نے اس مافیا کے خلاف سخت کاروائی کرنے اور جان کے تحفظ کے لئے چیف جسٹس آف پاکستان میاں ثاقب نثار اور ڈی پی او مظفرگڑھ عمران کشور سے اپیل کی ہے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...