راجن پور ، بوگس ایجوکیٹرز بھرتی کرنیکا انکشاف ،مزید کیسز منظر عام پر لانے کا دعویٰ

راجن پور ، بوگس ایجوکیٹرز بھرتی کرنیکا انکشاف ،مزید کیسز منظر عام پر لانے کا ...

  



جام پور(نامہ نگار)محکمہ تعلیم راجن پور نے حکومت پنجاب کی ایجوکیٹرز بھرتی میں میرٹ کی دھجیاں اڑادی ۔ ایجوکیٹرز بھرتی میں مزید چار بوگس کیسوں کا انکشاف۔ ضلع افسر نے بھی تصدیق کرتے ہوئے جلد مزید کیس سامنے لانے کی نوید سنا دی۔ تفصیل کے مطابق محکمہ تعلیم راجنپور میں دوہزار اور اٹھارہ میں 2270کے قریب ایجوکیٹرز بھرتی کرنے کی پنجاب حکومت نے منظوری دی ۔ محکمہ تعلیم کے افسران نے بھرتی کے عمل میں مبینہ طورقانون کی دھجیاں (بقیہ نمبر18صفحہ12پر )

اڑاتے ہوئے اور بھاری رقم کے عوض من پسند افراد کے علاوہ اپنے رشتہ داروں کو بھرتی کرلیا۔ بھرتی کے عمل میں جہاں افسران نے بہتی گنگا میں خوب ہاتھ صاف کیے وہاں پر ڈی ای او افس زنانہ کے کلرک ذی شان نے بھی پانچ اپنے رشتہ دار بھی بھرتی کرالیے ۔اعلی تعلیم کی ڈگری رکھنے کے باوجود بھرتی نہ ہونے والے امیدواوں نے جب ڈپٹی کمشنر کو تحقیقات کی درخواست دی تو انہون نے ڈی ای او فیاض احمد بزدار کو کرپشن کی تحقیقات کی ذمہ داری سونپی تو انہوں نے مختصر وقت میں پانچ بوگس بھرتی کے کیسوں کا انکشاف کر دیا ۔ جن میں میرٹ کو قتل عام کرکے صرف شناختی کارڈ پر امیدوار بھرتی کیے گئے ۔اور خزانہ سے تنخوائیں بھی نکلوائی جارہی تھی جبکہ عملی طور پر امیدوارسکول میں موجود نہ تھے۔ سابق ڈپٹی کمشنر راجن پور اللہ ڈتہ وڑائچ نے ڈی ایم او اسد علی کو انکوری افسر مقرر کیا جبکہ سی ای او تعلیم راجنپور نے سنےئر ہیڈماسٹر چوہدری نور احمد کی قیادت میں تین رکنی کمیٹی بنائی جو دو ماہ سے انکوری و تحقیقات کر رہی ہے۔ ضلع راجن پور کے ذمہ دار افسر نے انکشاف کیا ہے کہ مزید کرپشن کے چار کیس سامنے آگئے ہیں جن میں دوکیس مردانہ اور دو کیس زنانہ ڈی ای او افس کے ہیں ۔ بھرتی کے عمل میں کمیٹی نے قانون وقواعد کو بالاطاق رکھ کرکے من پسند افراد کو نوازہ گیا۔ مبینہ طور پر ملنے والی معلومات کے مطابق ڈی ای اوزنانہ راجن پور نے بھاری رشوت کے عوض فقیہ مریم ای ایس ای جی پی ایس کشانی ۔ رانا محمد سلیم ہائی سکول کوٹلہ مغلان ۔ شمس الہی ہائی سکول سکھانی والا۔ مبشر ظہور ای ایس ای بستی نزر محمد ودیگر شامل ہیں۔ان افراد کو غیر قانونی طریقہ سے بھرتی کیا گیا ۔ ذرائع نے دعوی نے کیا اگر ان کیسوں کی غیر جانبدارانہ تحقیقات کی جائیں تو مزید کرپشن کے کیس نکل ائیں گے۔ شہریوں جاوید احمدبھٹی۔ پیر بخش اور محسن خان نے وزیر اعلی پنجاب اور ڈپٹی کمشنر راجن پور سے فوری طور پر غیر جانبدارانہ تحقیقات کرکے ذمہ داران کے خلاف سخت کاروائی کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ ذرائع نے مزید دعوی کیا کہ ضلع راجنپور میں چند دنوں تک مزید ایک درجن کے قریب کرپشن کے کیسوں کے انکشاف کی امید ہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...