لاہور یوں کی خواہش پر محکمہ ریلویز کا 25سال بعد پھر لاہور جلو ٹرین چلانے کا فیصلہ 

لاہور یوں کی خواہش پر محکمہ ریلویز کا 25سال بعد پھر لاہور جلو ٹرین چلانے کا ...

  



لاہور (لیڈی رپورٹر)پاکستان ریلوے نے 25سال کے بعد لاہور جلو ٹرین چلانے کا فیصلہ کیا ہے۔ اس ٹرین کی ٹائمنگ واہگہ بارڈر پر پرچم کی تقریب کے حوالے سے رکھیں گے افتتاح آئندہ ہفتے کیا جائے گا۔ٹرین کو شٹل ٹرین کے طور پر چلایاجائیگا۔ لاہور اور گردونواح کے لوگوں کی خواہش پرٹرین چلائی جارہی ہے۔ان خیالات کا اظہار وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے ریلوے ہیڈکوارٹرز آفس لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا وزیر اعظم  عمران خان کی منظوری کے بعد ریلوے میں دو ہائی پروفائل ٹیکنیکل بنیادوں پر ایڈوائزر رکھیں جائیں گے۔ریلوے کی اربوں روپے کی اراضی سے متعلق انکا کہنا تھا ہمارے پاس ایم پی ٹو میں ایک لیگل ایڈوائزر ہے ایم پی ون میں ایک اور رکھا جائیگا۔ خواہش ہے ریلوے کے کمانڈ اینڈ کنٹرول سسٹم جو ہم ٹریک کیساتھ چلا رہے ہیں وزیر اعظم عمران خان اُس کا افتتاح کریں۔ عزاخیل میں افغان راہداری کیلئے جاری کام کیلئے اپنا بانڈنگ ویئرہاؤس بنالیاہے، علاوہ ازیں ریلوے نے تین ماہ میں اپنے ٹارگٹ سے ایک بلین روپے زیادہ کمائے ہیں۔افغان ٹرانزٹ کے بعد ریلوے کا خسارہ پانچ نہیں تین سال میں کم ہی نہیں ختم بھی ہوسکتاہے۔ ہمارایہ سال فریٹ و لینڈ کا ہے ہم 15فریٹ ٹرینوں کے ٹارگٹ کو حاصل کرچکے ہیں۔ملکی تاریخ میں پہلی بارہم اپنے فریٹ ٹارگٹ سے آگے ہیں۔ ہم نے پچھلے سال پسنجر میں 10بلین کا ریکارڈ ریونیوحاصل کیا۔ لوگ سوچتے رہ گئے پاکستان واحد ملک ہے جو پسنجر میں کمارہاہے۔بائیو میٹر ک کو آؤٹ سورس کرنے لگے ہیں تاکہ جو لوگ گھر بیٹھے تنخواہیں وصول کرتے ہیں اُن کا محاسبہ ہوسکے۔ ریلوے میں ہرقسم کے مافیاکو ختم کردیاجائے گا۔وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے کہا اگر امریکہ چاہتاتو اپنا سارا اسلحہ کراچی، پشاور اور تورخم تک بذریعہ ٹرین لے جاسکتاتھا لیکن اُس نے ہماری سٹرکوں کو استعمال کیا، بصورت دیگر ہمارا ریلوے ٹریک بہت زبردست حالت میں ہوجاتا،لیکن یہ کام اللہ تعالیٰ نے چین سے لینا ہے کیونکہ چین ہمارا قابل اعتبار دوست ہے چین سے ہی ایم ایل ون بنے گی جس کی تکمیل کے بعد ایم ایل ٹو کا کام شروع ہوجائیگا۔ سی پیک سے امریکہ کو بڑی تکلیف ہے کہ چین پاکستان کی ترقی میں کلیدی کردار کیوں ادا کررہاہے۔ آج تک امریکہ کی دوستی اور کرسٹل ڈیلر کا معاشقہ ایک ہی ہے جب امریکہ کو ہماری ضرورت ہوتی ہے تو وہ دوستی میں آجا تاہے اور جب اس کا مطلب نکل جاتاہے تو گڈ بائے کرکے چلاجاتاہے،یہی حال اس نے روس کی جنگ میں کیاجس سے سارا ملک دہشت گردی کی لپیٹ میں آگیا،لاکھوں لوگوں کی جانیں گئیں، اربوں ڈالر کا معاشی نقصان ہوا۔اس موقع پر انہوں نے خبردارکیا کہ14 سال پہلے میں نے ایم ایل ون کا کام شرو ع کیاتھاایم ایل ون ہی سی پیک کی شہ رگ ہے۔اُس وقت ایم ایل ون کا کسی نے سوچابھی نہیں تھا،میں نے ہی اس پر دستخط کیے تھے۔ اللہ تعالیٰ نے یہ کام مجھ سے لیاتھااب ایم ایل ون بننے جارہاہے اوراس کا سہرا وزیر اعظم عمران خان کے سرہے۔ 

جلو ٹرین فیصلہ

مزید : صفحہ آخر