ناروے کا واقعہ عالمی امن تباہ کرنے کی سازش ہے‘ عبداللہ حسین ہارون

ناروے کا واقعہ عالمی امن تباہ کرنے کی سازش ہے‘ عبداللہ حسین ہارون

  



کراچی(اسٹاف رپورٹر)اقوام متحدہ میں پاکستان کے سابق مندوب اور وزیر خارجہ عبداللہ حسین ہارون نے ناروے میں قرآن پاک کی توہین کے دلخراش والمناک واقعہ پر سخت احتجاج کرتے ہوئے اسے عالمی امن تباہ کرنے کی خطرناک سازش قرار دیا ہے۔انہوں نے اپنے مذمتی بیان میں کہا ہے کہ ناروے میں ہونے والے واقعے کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے۔اس سے پوری مسلم امہ کے مذہبی جذبات مجروح ہوئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اقوام متحدہ میں مذاہب کے احترام اور انسانی حقوق کا ضابطہ اخلاق تیار کیا جائے جو جدید تقاضوں سے ہم آہنگ ہو۔انہوں نے کہا کہ قرآن پاک کی بے حرمتی روکنے والے محمد الیاس عمر جیسے مجاہد ملت کی آنکھوں کے تارے ہیں۔قرآن پاک سے ٹکراؤ آزادی نہیں بربادی ہے دنیا کا کوئی مذہب جارحانہ آزادی کا متحمل نہیں ہوسکتا۔ان کا کہنا تھا کہ مختلف مذاہب کے درمیان مکالمے کو فروغ دے کر تشدد کا باب ہمیشہ کیلئے بند کیا جاسکتا ہے۔ یورپ میں ہر رنگ و نسل اور مذاہب کے لوگ مقیم ہیں یہ معاشرہ کسی قسم کی کشیدگی کا متحمل نہیں ہوسکتا۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر