ملکی بقاء کیلئے شعبہ تعلیم اور صحت کو پہلی ترجیح بنانا ہوگا: پروفیسر سعید اختر

    ملکی بقاء کیلئے شعبہ تعلیم اور صحت کو پہلی ترجیح بنانا ہوگا: پروفیسر سعید ...

  



ملتان (سٹاف رپورٹر)انسٹی ٹیوٹ آف فوڈ سائنسز اینڈ نیوٹریشن بہاء الدین زکریایونیورسٹی ملتان کے زیراہتمام سیمینار بعنوان ”خوراک میں غذائی اجزاء کی شمولیت“ سے خطاب کرتے ہوئے کینیڈا کے سینیئر فوڈ ٹیکنالوجسٹ کوئنٹن جانسن نے فوڈ ٹیکنالوجی بارے طلباء کو آگاہی دی وہ پاکستان میں آٹے کے اندر مختلف غذائی اجزاء کی شمولیت پر کام کررہے ہیں۔ انہوں نے پاکستان کی آبادی میں خاص طور پر خواتین اور بچوں میں بڑھتی ہوئی غذائی کمی پر روشنی ڈالی انہوں نے کہاکہ چیلنجز کا حل تلاش کرنے میں ریسرچ کا(بقیہ نمبر8صفحہ12پر)

اہم رول ہے. ڈائریکٹر انسٹی ٹیوٹ آف فوڈ سائنس اینڈ نیوٹریشن زکریایونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر سعید اختر نے کہا کہ ملکی بقاء کیلئے شعبہ تعلیم، صحت کو پہلی ترجیح بنانا ہوگا. یورپ اور مغرب کی ترقی کی وجہ ریسرچ کلچر ہے. انہوں نے بھی آٹے میں غذائی اجزاء کی کمی پر گفتگو کی اور ان مسائل کے حل کے لیے مناسب اقدامات کرنے کا مجوزہ خاکہ پیش کیا. انہوں نے کہا کہ آٹے میں غذائی اجزاء کی شمولیت کی آگاہی سے متعلق شعبہ فوڈ سائنس جنوبی پنجاب میں نمایاں کردار ادا کررہاہے. سیمینار میں نیوٹریشن انٹرنیشنل پاکستان کی نمائندہ ڈاکٹر عنبر، شعبہ فوڈ سائنس کے فیکلٹی ممبران ڈاکٹر طارق اسماعیل، ڈاکٹر ماجد حسین، ڈاکٹر خرم افضل اور ڈاکٹر عامر اسماعیل، ڈاکٹر توصیف، ڈاکٹر عدنان نے بھی اپنے خیالات کا اظہار کیا.

سعید اختر

مزید : ملتان صفحہ آخر