قبضہ مافیا کیخلاف بھرپور ایکشن چاہئے،وزیراعظم کے دورہ لاہور کے دوران اجلاسوں کی اندرونی کہانی سامنے آگئی

قبضہ مافیا کیخلاف بھرپور ایکشن چاہئے،وزیراعظم کے دورہ لاہور کے دوران ...
قبضہ مافیا کیخلاف بھرپور ایکشن چاہئے،وزیراعظم کے دورہ لاہور کے دوران اجلاسوں کی اندرونی کہانی سامنے آگئی

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیراعظم عمران خان نے دورہ لاہور کے دوران پنجاب انتظامیہ کو کہاہے کہ قبضہ مافیا کیخلاف بھرپور ایکشن چاہئے،چاہے کسی سیاسی جماعت کا قبضہ مافیا سے تعلق ہو، ایکشن کریں۔

وزیرعظم عمران خان کے دورہ لاہور کے دوران اجلاسوں کی اندرونی کہانی سامنے آگئی ،نجی ٹی وی اے آر وائی نیوز نے ذرائع کے حوالے سے کہاہے کہ وزیراعظم مختلف ترقیاتی سکیموں کے بروقت مکمل نہ ہونے پر برہم ہوئے ،وزیراعظم اشتہاریوں کی عدم گرفتاری اور کرائم کنٹرول نہ کرنے پر برہم ہوئے، وزیراعظم نے پنجاب انتظامی معاملات بہتراور کفایت شعاری پر عمل کی تعریف کی،مہنگائی سے متعلق مثبت اقدام اٹھانے پروزیراعلیٰ اور انکی ٹیم کی تعریف کی۔

وزیراعلیٰ پنجاب نے بریفنگ دیتے ہوئے کہاکہ ن لیگ کے متعدد رہنمااورایم پی ایزرابطے میں ہیں ،ن لیگ کے 7 سینئر رہنما لیڈرشپ سے ناراض ہیں ،کچھ ملاقات خفیہ کرتے ہیں کچھ سامنے آچکی ہیں ،وزیراعلیٰ نے کہاکہ 42 سیاستدانوں نے زمین پر قبضوںسے غیرقانونی رقم بنائی ،متعلقہ سیاستدانوں نے منصوبوں سے بھی غیرقانونی رقم بنائی،پنجاب حکومت کولیگی سیاستدانوں کیخلاف ثبوت مل چکے ہیں ،قانونی کارروائی کرکے بھرپور ایکشن لیا جائے گا۔وزیر صنعت و تجارت میاں اسلم اقبال نے بریفنگ دیتے ہوئے کہاکہ ٹیوٹا میں 90ہزار سے داخلے بڑھا کر 2 لاکھ 30 ہزار کردیئے گئے،وزیراعظم نے وزیرعلیٰ پنجاب اورمیاں اسلم کی کارکردگی کو سراہا۔

مزید :

قومی -علاقائی -پنجاب -لاہور -