شعیب اختر کیخلاف 10کروڑ33لاکھ روپے ہرجانہ کا دعویٰ خارج

   شعیب اختر کیخلاف 10کروڑ33لاکھ روپے ہرجانہ کا دعویٰ خارج

  

 لاہور(کامران مغل)سول عدالت کے جج عابد مہرنے پی ٹی وی سپورٹس کی جانب سے سابق کرکٹرشعیب اختر کے خلاف 10کروڑ33لاکھ روپے ہرجانہ کا دعویٰ خارج کر دیا،واضح رہے کہ پی ٹی وی سپورٹس نے دعویٰ میں شعیب اختر کے خلاف لگائے گئے الزامات واپس لے لئے ہیں جس پر عدالت نے یہ دعویٰ واپس لینے کی بنیاد پر اسے خارج کرنے کاحکم جاری کیا قبل ازیں عدالت کوبتایا گیا کہ شعیب اختر کی پی ٹی وی سپورٹس سے صلح ہو گئی  پی ٹی وی سپورٹس کی جانب سے کہا گیاکہ شعیب اختر کے خلاف 10 کروڑ 33 لاکھ کے دعویٰ میں مزید کارروائی نہیں کرنا چاہتے۔ 

 پی ٹی وی سپورٹس کی جانب سے دعویٰ میں موقف اختیارکیا گیا تھا کہ شعیب اختر سے ٹی ٹوینٹی ورلڈ کپ پر تجزیہ کیلئے پروگرام کا معاہدہ کیا معاہدے کے تحت شعیب اختر نے 36 پروگرامز میں تجزیہ دینا تھا شعیب اختر معاہدے کے تحت پی ٹی وی کے علاوہ کسی بھی چینل پر تجزیہ نہیں دے سکتے تھے  شعیب اختر نے ٹی ٹوینٹی ورلڈ کے دوران 25 اکتوبر کو دو نجی چینلز پر تجزیہ دیا شعیب اختر نے بیماری کے جواز پر 25 اکتوبر کو پی ٹی وی پر تجزیہ نہ دینے کا بلاجواز عذر پیش کیا، قومی کرکٹ میں موجودگی کے وقت بھی شعیب اختر ذمہ داریوں سے لاپرواہی برتتے رہے، شعیب اختر اپنے خراب رویہ  کے سبب کئی بار قومی ٹیم سے بھی نکالے جا چکے شعیب اختر نے 26 اکتوبر کو پروگرام اینکر نعمان نیاز سے جھڑپ کو جواز بنا کر آن ایئر پروگرام میں استعفی دے دیا، شعیب اختر نے معاہدہ ختم کرنے سے قبل نوٹس نہیں اور نہ ہی 3 ماہ کی رقم ادا کی، عدالت سے استدعاہے کہ معاہدے کی خلاف ورزی پر شعیب اختر کے خلاف 10 کروڑ 33 لاکھ روپے کی ڈگری جاری کی جائے۔

مزید :

علاقائی -