افغانستان میں امن کا مطلب پاکستان میں امن: جنرل باجوہ 

  افغانستان میں امن کا مطلب پاکستان میں امن: جنرل باجوہ 

  

        راولپنڈی(آئی این پی)چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ  نے انسانی  بحران  کو روکنے کیلئے افغانستان کو انسانی امداد پہنچانے کی خاطر فوری طور ادارہ جاتی طریقہ کار وضع کرنے کی ضرورت پر  زوردیتے ہوئے کہاہے کہ افغانستان میں امن کا مطلب پاکستان میں امن ہے،پاکستان عالمی اور علاقائی معاملات میں اٹلی کے کردار کو قدر کی نگاہ سے دیکھتا ہے اور ہم اپنے دوطرفہ تعلقات کو فروغ دینے کے خواہاں ہیں۔پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ سے جمعرات کو  یہاں جی ایچ کیو میں اٹلی کے سیکرٹری جنرل برائے دفاع وقومی آرمامنٹس ڈائریکٹر لیفٹیننٹ جنرل لوسیانو پورٹو لانو نے ملاقات کی جس دوران باہمی دلچسپی کے امور،علاقائی سلامتی،افغانستان کی  تازہ ترین صورتحال اور  بالخصوص دونوں ملکوں کے درمیان تربیت اور انسداد دہشت گردی کے شعبوں میں فوجی تعاون بڑھانے کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا گیا۔اس دوران آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا کہ پاکستان عالمی اور علاقائی معاملات میں اٹلی کے کردار کو قدر کی نگاہ سے دیکھتا ہے اور ہم اپنے دوطرفہ تعلقات کو فروغ دینے کے خواہاں ہیں۔آرمی چیف نے انسانی تباہی کو روکنے کیلئے افغانستان کو انسانی امداد پہنچانے کی خاطر فوری طور ادارہ جاتی طریقہ کار وضع کرنے کی ضرورت پر بھی زوردیا۔جنرل قمر جاوید باجوہ نے زور دے کر کہا کہ افغانستان میں امن کا مطلب پاکستان میں امن ہے۔ آئی ایس پی آر کے مطابق ملاقات کے دوران اٹلی کے  سیکرٹری جنرل برائے دفاع وقومی آرمامنٹس ڈائریکٹر لیفٹیننٹ جنرل لوسیانو پورٹو لانو نے پاکستان کی مسلح افواج کی پیشہ ورانہ مہارت کا اعتراف کرتے ہوئے مختلف شعبوں میں تعاون بڑھانے کے عزم کا اظہار کیا۔انہوں نے افغانستان کی صورتحال میں پاکستان کے کردار،سرحدی انتظام کیلئے خصوصی کوششوں اور علاقائی استحکام میں پاکستان کے کردارکو سراہا۔

 جنر ل باجوہ  

مزید :

صفحہ اول -