مٹھی :25 روز میں 23 بچے غذائی قلت سے جاں بحق ؛ معاملہ اتنا بڑا نہیں : ڈپٹی کشمنر کی ہٹ دھرمی

مٹھی :25 روز میں 23 بچے غذائی قلت سے جاں بحق ؛ معاملہ اتنا بڑا نہیں : ڈپٹی کشمنر ...
مٹھی :25 روز میں 23 بچے غذائی قلت سے جاں بحق ؛ معاملہ اتنا بڑا نہیں : ڈپٹی کشمنر کی ہٹ دھرمی

  

مٹھی(مانیٹرنگ ڈیسک)صوبہ سندھ میں غذائی قلت کے شکار علاقے تھرپارکر میں ضلع مٹھی کے سول ہسپتال میں آج ایک اور بچہ دم توڑ گیا ہے جس کے بعد صرف پچھلے 25 دنوں میں جاں بحق ہونے والے بچوں کی تعداد 23 ہو گئی ہے۔ بچے کی ہلاکت کے بعد ڈپٹی کمشنر مٹھی آصف جمیل ہسپتال پہنچے تو میڈیا سے بات چیت میں انہوں نے رٹ لگائے رکھی کہ یہ معاملہ اتنا بڑا نہیں بلکہ صورتحال ہمارے مکمل کنٹرول میں ہے۔ دوسری جانب ایک حاملہ عورت بھی اسی ہسپتال میں بے یارومددگار موجود ہے جس کو دیکھنے کے لئے کوئی ڈاکٹر تک موجود نہیں۔ واضح رہے اس سے قبل بھی تھرپارکر میں غذائی قلت کے سبب کم عمر بچوں کی بڑی تعداد موت کے منہ میں جا چکے ہے مگر سندھ کے حکمران ان سے قطع تعلق کئے نظر آ تے ہیںتاہم ایک سرکاری رپورٹ کے مطابق ماہ اپریل کے بعد سے 249 بچے غذائی قلت کا شکار بن چکے ہیں۔

مزید :

قومی -اہم خبریں -