یمن سے متعلق اسمبلی میں قرارداد پر سعودی عرب سے تعلقات خراب ہوئے ، اسحاق ڈار

یمن سے متعلق اسمبلی میں قرارداد پر سعودی عرب سے تعلقات خراب ہوئے ، اسحاق ڈار

  

لندن(آئی این پی )سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے کہا ہے کہ نوازشریف کے سعودی عرب سے گہرے تعلقات تھے اور ہیں ، یمن سے متعلق اسمبلی میں قرارداد آنے پر سعودی عرب سے تعلقات خراب ہوئے ، اس قرارداد پر سعودی عرب نے برا منایا تھا، یمن سے متعلق قرارداد نہ آتی تو سعودی عرب مزید امداد دیتا،سعودی عرب نے (ن) لیگ حکومت کوڈیڑھ ارب ڈالر کا تحفہ دیا تھا،سعودی عرب نے جو ڈیڑھ ارب ہمیں دیے وہ واپس نہیں کرنا تھے، موجودہ حکومت نے 12ارب ڈالر کا ڈھول پیٹا ہے جو غلط بیانی ہے ، سعودی عرب نے عمران خان حکومت سے زیادہ سے زیادہ 6ارب ڈالر کی ڈیل کی ہے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعرات کو نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ اسحاق ڈار نے کہا کہ سعودی عرب پاکستان کا دوست ہے اس میں کوئی شک نہیں،98میں بھی سعودی عرب سے 2ارب ڈالر مفت دینے کا معاہدہ ہوا تھا،ڈیڑھ ارب ڈالر سعودی عرب نے دوست کی حیثیت سے تحفہ دیا تھا،سعودی عرب نے (ن) لیگ حکومت کو ایک تحفہ دیا تھا،نوازشریف کے سعودی عرب سے گہرے تعلقات تھے اور ہیں ۔

اسحاق ڈار

مزید :

صفحہ آخر -