بڑھتی مہنگائی سے انڈسٹریز اور ٹریڈرز کو نقصان پہنچ رہا ہے: پیاف 

  بڑھتی مہنگائی سے انڈسٹریز اور ٹریڈرز کو نقصان پہنچ رہا ہے: پیاف 

  

   لاہور(نیوز رپورٹر)پاکستان انڈسٹریل اینڈ ٹریڈرز ایسو سی ایشنز فرنٹ(پیاف) میاں نعمان کبیر نے سیئنر وائس چیئرمین ناصر حمید خان  اور وائس چیئرمین جاوید اقبال صدیقی کے ہمراہ پریس ریلیز جاری کرتے ہوئے کہا کہ بڑھتی ہوئی مہنگائی عوام کے ساتھ ساتھ ملکی معیشت کیلئے زہر قاتل ہے۔اس سلسلے میں وزیر اعظم پاکستان عمران خان کا نوٹس لینا خوش آئند ہے۔متعلقہ حکام اس پر ایکشن لیں تاکہ مہنگائی میں بتدریج کمی ہو سکے۔مصنوعی مہنگائی کرنے والوں کے خلاف عوام کے مسائل میں دلچسپی لیتے ہوئے سخت ایکشن لیا جائے  تاکہ عوام کو ریلیف مل سکے۔ملک میں کاروبار کرنے کی لاگت میں اضافے نے صنعت کاروں اور تاجروں کی زندگی کو اور بھی مشکل بنا دیا ہے۔ملک میں پیداواری لاگت کے بڑھنے کی وجہ سے انڈسٹریز اور ٹریڈرز کو بتدریج نقصان پہنچ رہا ہے۔ انڈسٹری کے لئے متوقع پیکج میں صنعتوں کو بجلی  و گیس کے ٹیرف پر ریلیف دیا جائے۔ انڈسٹری کی ریفنڈ زادائیگیاں بزنس کمیونٹی سے کئے گئے وعدوں کے مطابق جلد از جلد کی جائیں۔وائس چیئرمین جاوید اقبال صدیقی نے کہا    پیداواری لاگت بڑھنے سے صنعتوں کی شرح نمو کم ہو کر رہ گئی ہے۔

جس سے صنعتکاروتاجر برادری پریشانی کا شکار ہیں کیونکہ بڑھتے ہوئے بے جا ٹیکس اور گیس و بجلی کی قیمتوں میں خطے کے دیگر ممالک کی نسبت اضافہ سے اشیاء کی پیداواری لاگت دن بدن بڑھ رہی ہیں جس سے بالواسطہ طور پر عوام متاثر ہورہی ہے۔ پیداوار کم ہونے سے  برآمدات بھی متاثر ہو رہی ہیں اور برآمدات میں کمی سے تجارتی خسارہ بڑھتا جا رہا ہے۔ برآمدات بڑھانے کے لئے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کیے جائیں۔

مزید :

کامرس -