ٹیکس ریٹ کم کرنے کی ضرورت ہے، سید حسین علی قادری

ٹیکس ریٹ کم کرنے کی ضرورت ہے، سید حسین علی قادری

  

لاہور(این این آئی)پروفیشنل ریسرچ فورم کے چیئرمین سید حسن علی قادری نے کہا ہے کہ ٹیکس اہداف کو پورا کرنے اور ٹیکس بیس کو بڑھانے کے لیے ٹیکس ریٹ کم کرنے کی ضرورت ہے، برطانیہ کی طرز پر فلیٹ ریٹ سکیمیں متعارف کرائی جائیں،سیلز ٹیکس میں رجسٹرڈ نہ ہونے کی سب سے بری وجہ کمپلائنس کا سٹ کا بہت زیادہ ہونا ہے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ملاقات کیلئے آنے والے تاجروں کے وفد سے ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر لاہور ٹیکس بار کے سابق نائب صدر عاشق علی رانا، زوہیب الرحمن زبیری، سابق صدر لاہور چیمبر آف کامرس کاشف انور، سابق صدر لاہور ٹیکس بار افتخار شبیر اوردیگر بھی موجودتھے۔انہوں نے کہا کہ سیکشن 73 کے مطابق بینک چینل کے ذریعے ادائیگی کی ڈیمانڈ کی جاتی ہے جبکہ ہماری کیش بیسڈ اکانومی ہے،سیلز ٹیکس ریٹس 6/5 فیصد سے زیادہ نہیں ہونا چاہیے۔انہوں نے کہا کہ پہلے تین سال بعد کیس آڈٹ کے لیے سلیکٹ ہوتا تھا مگر اب ہر سال سیلز ٹیکس کے کیسز کو آڈٹ کے لیے سلیکٹ کر لیا جا تا ہے اور پھر آڈٹ کے ذریعے خوف و ہراس پھیلا یا جاتا ہے تاکہ کرپشن کو فروغ مل سکے۔ انہوں نے کہا کہ ترقی یافتہ ممالک میں سیلز ٹیکس کے دائرہ کار کو وسیع بنانے کے لیے فلیٹ ریٹ سکیمیں متعارف کروائی گئی ہیں اور ٹیکس ریٹ کم کیے گئے یہی وجہ ہے کہ وہاں سیلز ٹیکس کی مدمیں 30فیصد میں وصولی کی جارہی ہے۔

 جبکہ ترقی پذیر ممالک 10 فیصد بھی سیلز ٹیکس اکٹھا نہیں کر پاتے جس کی وجہ سے ٹیکس اہداف پورے کرنا ناممکن ہو جاتا ہے، 90فیصد سیلز ٹیکس حکومتی خزانے تک پہنچتا ہی نہیں ہے، سیلز ٹیکس کی ریٹرن سادہ اور ایک صفحہ پر مشتمل ہونی چاہیے۔

مزید :

کامرس -