افغانستا ن، سکیورٹی فورسز کے خصوصی آپریشن میں القاعدہ رہنما محسن المرسی ہلاک 

        افغانستا ن، سکیورٹی فورسز کے خصوصی آپریشن میں القاعدہ رہنما محسن ...

  

  کابل /واشنگٹن(آئی این پی) افغان صوبے غزنی میں کئے گئے ایک خصوصی آپریشن کے دوران انتہائی مطلوب القاعدہ رہنما محسن المرسی کو ہلاک کردیا گیا ہے۔ افغانستان کے نیشنل ڈائریکٹوریٹ آف سیکیورٹی (این ڈی ایس)کی جانب سے کی گئی ٹویٹ کے مطابق افغان صوبے غزنی میں ایک خصوصی آپریشن میں کیا گیا، جس میں القاعدہ رہنما محسن المرسی ہلاک ہوگئے ہیں۔ محسن المرسی کو القاعدہ کا اہم لیڈر سمجھا جاتا تھا، ان کا نام امریکی فیڈرل بیورو آف انویسٹی گیشن (ایف بی آئی) کی انتہائی مطلوب دہشت گردوں کی فہرست میں شامل تھا۔ امریکی نیشنل کانٹر ٹیررازم سینٹر کے سربراہ کرس ملر نے بھی محسن المرسی کی ہلاکت کی تصدیق کی ہے، انہوں نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ محسن المرسی کی ہلاکت القاعدہ کے لیے بڑا دھچکہ ہے۔ محسن المرسی مصر کے شہری ہیں اور انہیں حسمان عبدالروف بھی کہا جاتا ہے۔ محسن المرسی کو القاعدہ کا اہم لیڈر سمجھا جاتا تھا، امریکا نے محسن المرسی کو غیر ملکی دہشت گرد تنظیموں کی مدد کرنے اور امریکی شہریوں کو قتل کرنے کی سازش کا مورد الزام ٹھہرایا گیا تھا۔دوسری جانب گزشتہ روز افغانستان کے دارالحکومت کابل میں ایک تعلیمی مرکز پر ہونے والے خودکش حملے میں جاں بحق افراد کی تعداد 30 ہو گئی جبکہ 70 افراد زخمی ہیں۔

محسن المرسی ہلاک

مزید :

صفحہ اول -