نیشنل پارک لال سوہانرا کا40ہزار ایکڑ رقبہ ھوبارہ فاؤنڈیشن کوالاٹ 

  نیشنل پارک لال سوہانرا کا40ہزار ایکڑ رقبہ ھوبارہ فاؤنڈیشن کوالاٹ 

  

 بہاولپور(ڈسٹرکٹ رپورٹر) حکومت پنجاب نے نیشنل پارک لال سوہانرا کا40 ہزار ایکڑ رقبہ تلور اورچنکارہ ہرن کی افزائش کیلئے ہوبارہ فاؤنڈیشن کو99 سالہ لیز پرالاٹ کردیاچولستان میں 60ٹوبہ جات پر200 سے زائد خاندان اور15500 جانورنقل مکانی کرنے پر(بقیہ نمبر48صفحہ7پر)

مجبور ہوگئے، خوراک کی قلت انسانوں اورجانوروں کی زندگیاں خطرے میں پڑ گئیں۔ تفصیل کے مطابق حکومت پنجاب نے ضلع رحیم یارخان میں ابوظہبی کوچولستانی علاقہ کاایک لاکھ ایکڑرقبہ99 سالہ لیز پرالاٹ کیاہواہے اب نیشنل پارک لال سوہانرا کے162876 ایکڑ میں سے مزید40788 ایکڑرقبہ ہوبارہ فاؤنڈیشن کوتلور چنکارہ ہرن اورکالے ہرن کی افزائش کیلئے99 سالہ لیز پرالاٹ کردیاہے اس علاقہ کی حددومیں چولستانیوں کے60ٹوبہ جات موجود ہیں وہاں پر15 ہزار500گائے اونٹ اوربھیڑبکریاں موجود ہیں اور200سے زائد خاندان قیام پذیر ہیں اورجانوروں کیلئے چراگاہیں بھی موجود تھیں لیکن40 ہزار ایکڑ سے زائد رقبہ ابوظہبی کے حوالے کرنے کے بعدانہوں نے15کلومیٹر لمبے اور11کلومیڑچوڑے رقبہ پرباڑ لگاناشروع کردی ہے جس کی بلندی10فٹ بتائی جارہی ہے۔ ذرائع کاکہناہے کہ ابوظہبی انتظامیہ نے اس حددومیں موجود چولستانیوں کوعلاقہ خالی کرنے کاحکم بھی جاری کردیاہے جس کی وجہ سے چولستانی افراد شدید پریشانیوں کاشکار ہیں ان کی متبادل خوراک‘ رہائش گاہوں‘ پینے کے پانی کی دستیابی اورچراگاہوں کابھی کوئی بندوبست نہ کیاگیاہے اس حوالے سے کمشنربہاولپورآصف اقبال چوہدری نے بتایاکہ انہوں نے ایم ڈی چولستان کوسخت ہدایات جاری کی ہیں کہ جب تک ہوبارہ فاؤنڈیشن کوالاٹ ہونیوالے رقبہ کے متاثرہ چولستانیوں کیلئے متبادل انتظامات نہیں ہوتے انہیں وہاں سے بے دخل نہ کیاجائے اورانہیں بھرپورسہولیات فراہم کی جائیں۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -