دوحہ ایئر پورٹ پر 13 آسڑیلوی خواتین کی طیارے سے اتار کر مکمل برہنہ کر کے تلاشی ، لیکن کیوں ؟ کوئی منشیات کا معاملہ نہیں تھا بلکہ ۔۔ حیران کن خبر آ گئی 

دوحہ ایئر پورٹ پر 13 آسڑیلوی خواتین کی طیارے سے اتار کر مکمل برہنہ کر کے تلاشی ...
دوحہ ایئر پورٹ پر 13 آسڑیلوی خواتین کی طیارے سے اتار کر مکمل برہنہ کر کے تلاشی ، لیکن کیوں ؟ کوئی منشیات کا معاملہ نہیں تھا بلکہ ۔۔ حیران کن خبر آ گئی 

  

دوحہ (ڈیلی پاکستان آن لائن )آسٹریلیا کی حکومت نے دوحہ ایئر پورٹ پر نومولود ملنے پر خواتین کا برہنہ کرتے ہوئے طبی معائنہ کرنے پر شدید تشویش کا اظہار کیا ہے ۔

تفصیلات کے مطابق دوحہ کے حمد انٹرنیشنل ایئر پورٹ سے دو اکتوبر کو سڈنی جانے والی پرواز روانہ ہونے والی تھی لیکن حکام نے مبینہ طور پر ایئر پورٹ پر ایک نومولود کا پتہ لگنے کے بعد اس میں چار گھنٹے تاخیر کی۔طیارے میں سوار تمام خواتین کو اترنے کا حکم دیا گیا تھا۔ طیارے میں موجود ایک ڈاکٹر نے بتایاکہ خواتین کچھ دیر بعد واپس آئیں تو ان میں بیشتر پریشان تھیں۔

ڈاکٹر ولف گینگ بابیک نے کہاکہ کم از کم ان میں سے ایک رورہی تھی اور وہ تبادلہ خیال کر رہی تھیں کہ کیا ہوا ہے اور یہ ناقابل قبول اور ناگوار ہے۔خواتین کے واپس آنے کے بعد طیارے نے پرواز کی۔ ڈاکٹر بابیک نے بتایا انہوں نے کچھ مسافروں سے بات کی جنہوں نے بتایا کہ انہیں ایئر پورٹ کے ایک پرائیوٹ ایریا میں لے جایا گیا۔

خواتین نے بتایاسیکیورٹی اہلکار انہیں ایک کمرے میں لے گئے۔ نہیں معلوم تھا کہ کیا ہونے جا رہا ہے اور پھر ایک لیڈی ڈاکٹر کے سامنے پیش کیا گیا جہاں بنیادی طور پربے لباس تلاشی لی گئی۔ تام کپڑے یہاں تک کے زیر جامہ بھی اتار دیا گیا۔پھر لیڈی ڈاکٹر نے یہ معلوم کرنے کی کوشش کی کہ حال ہی میں کس نے بچے کو جنم دیا ہے۔ کسی نے بتایا تھا کہ ٹوائلٹ سے ایک نومولود ملا ہے اور یہ جاننے کی کوشش کی جا رہی ہے کہ اس کی ماں کون ہے۔دیگراطلاعات کے مطابق یہ معائنہ رن وے پر ایک ایمبولینس میں ہوا تھا اور تیرہ آسٹریلوی خواتین کی بے لباس تلاشی لی گئی۔

آسٹریلوی محکمہ برائے امور خارجہ اور تجارت( ڈی ایف اے ٹی ) کے ترجمان نے گارجین آسٹریلیا کو بتایاکہ قطر ائیر ویز کی سڈنی جانے والی پرواز میں مسافروں سے روا سلوک سے متعلق رپورٹوں سے آگاہ ہیں۔ قطری حکام اور قطر ائیر ویز سے مزید معلومات حاصل کر رہے ہیں۔

آسٹریلیا کے محکمہ برائے امور خارجہ اور تجارت نے تازہ بیان جاری کیا جس میں کہا گیا کہ’ آسٹریلیا کی حکومت نے قطری حکام کے ساتھ واقعہ پر شدید تشویش کا باضابطہ طور پراظہار کیا ہے۔ یقین دہانی کرائی گئی ہے کہ واقعے کی تفصیلی اور شفاف معلومات جلد فراہم کی جائے گی۔

مزید :

بین الاقوامی -