گلوکارہ میشاء شفیع کیخلاف ہرجانہ کیس کی سماعت 3نومبر تک ملتوی

گلوکارہ میشاء شفیع کیخلاف ہرجانہ کیس کی سماعت 3نومبر تک ملتوی

  

لاہور(نامہ نگار)سیشن عدالت نے گلوکار علی ظفر کی درخواست پر گلوکارہ میشاء شفیع کے خلاف 100 کروڑ روپے ہرجانہ کیس کی سماعت 3نومبر تک ملتوی کردی،عدالت نے آئندہ سماعت پر گلوکارعلی ظفر کے وکلاء سے درخواست پر دلائل طلب کر لئے ایڈیشنل سیشن جج اظہر اقبال رانھا نے کیس پر سماعت کی گلوکارہ میشاء شفیع کی جانب سے حاضری معافی اور ویڈیو لنک کے ذریعے بیان ریکارڈ کرانے کی درخواست جمع کرا دی گئی،گزشتہ روز عدالت میں کسی گواہ کا بیان قلمبند نہیں کیا جا سکا،گلوکارعلی ظفر کی جانب سے ایڈووکیٹ حشام احمد خان بطور کونسل پیش ہوئے جبکہ گلوکارہ میشاء شفیع کی جانب سے ایڈووکیٹ ثاقب جیلانی بطور وکیل صفائی پیش ہوئے،گلوکار، اداکار علی ظفر کی جانب سے گلوکارہ میشا ء شفیع کے خلاف 100کروڑروپے ہرجانہ کا دعوی دائر کرتے ہوئے موقف اختیارکیا ہے کہ گلوکارمیشا شفیع نے ہراساں کرنے کے بے بنیاد الزامات عائد کئے گلوکارہ میشا شفیع نے سستی شہرت کے لیے جھوٹے الزامات عائد کئے گلوکارہ میشا شفیع کے جھوٹے الزامات سے پوری دنیا میں شہرت متاثر ہوئی،عدالت سے استدعاہے کہ گلوکارہ میشا شفیع کو 100 کروڑ روپے ہرجانہ ادا کرنے کا حکم دیاجائے۔

مزید :

علاقائی -