ہماری لڑائی جھوٹ اور بد نیتی سے ہے، احتساب کاعمل کمزور نہیں پڑنے دینگے: وزراء مشیران 

ہماری لڑائی جھوٹ اور بد نیتی سے ہے، احتساب کاعمل کمزور نہیں پڑنے دینگے: ...

  

لاہور(نامہ نگار)وفاقی وزیرقانون فروغ نسیم نے کہاہے کہ ہماری لڑائی جھوٹ اور بدنیتی سے ہے،میں کسی اور پارٹی سے ہوں،میں وزارت قانون کے آفس میں بیٹھا ہوں سفارشیں بھی آئیں لیکن میرٹ سے ہٹ کے کچھ نہیں کیا،ان خیالات کا اظہار انہوں نے لاہورمیں الحمرہ ہال میں پی ٹی آئی لائرز کے زیر اہتمام کنونشن کے انعقاد کے موقع پرخطاب کرتے ہوئے کیا، انہوں نے مزید کہا کہ لوگوں نے انہیں دھکا دینے کی کوشش کی لیکن عمران خان نے کہا کہ نہیں وزیر قانون تم ہی ہو،سوا لاکھ سے ڈیڑھ لاکھ کیسز نمٹائے ہیں،آپ وکلا ء وعدہ کریں آپ نئے قانون پر عملدرآمد کرائیں گے،سسٹم میں نے بنا دیا آب آگے معاملہ وکلا کے ہاتھ میں ہے،2018ء میں جب آیا تو مجھے انصاف لائیرز فورم کا نام تک نہیں پتا تھا،ہم نے انصاف لائیرز فورم کو مروج کرانے کے لیے دن رات کام کیا،اس موقع پروزیر اعظم کے مشیر شہزاد اکبر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف کی بنیاد حصول انصاف کے لئے تھی عمران خان کے انصاف کے حصول میں بہت سے مافیاز آڑے آ رہے ہیں،وہ مافیا طاقتور بھی ہیں اورتجربہ کار بھی،نظام انصاف کی درستگی ہماری ذمہ داری ہے،ہم جتنی مرضی اصلاحات کر لیں،وکلا کے بغیر کامیاب نہیں ہو سکتیں،کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے پی ٹی آئی سینٹرل پنجاب کے صدراعجاز چودھری نے کہا کہ نریندر مودی نے 70 سال بعد مسلمانوں کو قائداعظم کا دو قومی نظریہ سمجھا دیا،عمران خان ایک ایسے سیاستدان ہیں جنھوں نے سیاست سے پہلے اپنی قیادت منوائی،وزیر مملکت فرخ حبیب نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پہلی بار لوگوں کو احتساب کا خوف پیدا ہوا،بڑے بڑے لوگوں کو جیلوں میں جانا پڑا،احتساب کے عمل کو کسی صورت کمزور نہیں پڑنے دینا،جہاں جہوریت اور طاقت ہو وہاں اختساب کا عمل بھی ہوتا ہے،ہماری حکومت قانون سازی پر توجہ دے رہی ہے،لوگوں کو فوری اور سستا انصاف فراہم کرنا عمران خان کی ترجیحات  میں شامل ہے،اس موقع پر وکلاء سمیت دیگرمقررین نے بھی کنوشن سے خطاب کیا۔

فروغ نسیم

مزید :

صفحہ اول -