بھٹہ مالکان کی من مانیاں،اینٹوں کی قیمتوں میں پھر اضافہ

بھٹہ مالکان کی من مانیاں،اینٹوں کی قیمتوں میں پھر اضافہ

  

جام پور(نمائندہ پاکستان)جام پور سمیت ضلع بھر میں بھٹہ خشت کے مالکان نے اینٹوں کے نرخوں میں خود ساختہ اضافہ کردیا،نئے گھر،عمارتین وغیرہ تعمیر کروانے والے شہریوں کی چیخیں نکل گئیں، تفصیلات کے مطابق ہوس زر کی لت میں مبتلا بھٹہ خشت مالکان کی ہٹ دھرمی کے باعث اینٹوں وٹائلوں کی قیمتیں آسمان پر جاپہنچیں،اینٹوں کی قیمتوں میں غیر معمولی اضافہ(بقیہ نمبر8صفحہ6پر)

 اورمتعلقہ ذمہ داروں کی عدم دلچسپی سے شہری سراپا احتجاج ہیں۔اس حوالے سے نئے گھر تعمیر کرنے والے شہریوں محمد راشد، الٰہی بخش، اللہ وسایا، احمد بخش، احمد علی، محمد نعیم،غلام سرور، محمد عرفان و دیگرنے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ضلع راجن پور میں متعلقہ محکمہ کے ذمہ داران کی عدم دلچسپی کے باعث بھٹہ خشت مالکان آئے روز اینٹوں کے نرخوں میں خود ساختہ اضافہ کرکے شہریوں کے مسائل میں اضافہ کا باعث بن رہے ہیں،انہوں نے کہا کہ ضلع راجن پور میں ریت،مٹی،پانی،کوئلہ تمام اشیاء وافر مقدار میں پائی جاتی ہیں جبکہ بھٹہ خشت مالکان نے لاہور،اسلام آباد اور کراچی کے نرخ ضلع رجن پور بالخصوص جام پور میں لاگو کررکھے ہیں جو کہ نئی عمارتین تعمیر کرنے والے شہریوں کے ساتھ سخت زیادتی ہے،قانون نافذ کرنے والے اداروں کی عدم دلچسپی کی وجہ سے بھٹہ خشت مالکان نے فی ہزار اینٹ کے نرخوں میں ہزاروں روپے کا اضافہ کردیا لیکن قانون نافذ کرنے والے اداروں کی پراسرار خاموشی سوالیہ نشان بن چکی ہے،شہریوں نے ڈسٹرکٹ آفیسر انڈسٹری،پرائسز،ویٹس اینڈ میئر منٹس،ڈپٹی کمشنر سے مطالبہ کیاہے کہ ضلع راجن پور میں موجود بھٹہ مالکان کو فی ہزار اینٹ کے سرکاری نرخوں پر فروخت کرنے کا پابند بنایا جائے تاکہ شہری تعمیر ومرمت کا کام جاری رکھ سکیں اور مزدوروں کے گھروں کے چولہے جلتے رہیں۔

اضافہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -