’’ بھارت کو یہ دو اعظم ہمیشہ یاد رہیں گے‘‘ شعیب اختر ایک مرتبہ پھر میدان میں آ گئے

’’ بھارت کو یہ دو اعظم ہمیشہ یاد رہیں گے‘‘ شعیب اختر ایک مرتبہ پھر میدان ...
’’ بھارت کو یہ دو اعظم ہمیشہ یاد رہیں گے‘‘ شعیب اختر ایک مرتبہ پھر میدان میں آ گئے
سورس: Twitter/@shoaib100mph

  

راولپنڈی (ویب ڈیسک) راولپنڈی ایکسپریس شعیب اختر کا کہنا ہے کہ بھارت کو دو اعظم ہمیشہ یاد رہیں گے، قائد اعظم اور بابر اعظم۔

نجی ٹی وی جیو نیوز کے پروگرام ’کیپٹل ٹاک‘ میں گفتگو کرتے ہوئے شعیب اختر نے کہا کہ پاکستان کو جتوانے میں سب سے بڑا کردار  بھارتی میڈیا نے ادا کیا۔انہوں نے کہا کہ بھارتی میڈیا اپنے کھلاڑیوں پر بہت دباؤ ڈالتا ہے اور  بہت اوور  ری ایکٹ کرتا ہے جبکہ بھارت کو دو اعظم ہمیشہ یاد رہیں گے، قائد اعظم اور بابر اعظم۔ان کا کہنا تھا کہ پاکستان نے ثابت کردیا کہ پاکستان ورلڈ چیمپئن ہے، باقی ٹیمیں بکھری ہوئی ہیں جبکہ پاکستان کے پاس متوازن ٹیم ہے۔

شعیب اختر کا کہنا تھا کہ ویرات کوہلی جب ٹاس ہارا تو اس کا منہ اتر گیا تھا جس کے بعد  کوہلی کو چاہیے تھا کہ وہ چارج لیتا لیکن اس نے نہیں لیا۔ان کا کہنا تھا کہ بھارت کا ایک ہی مقصد تھا کہ پاکستان کی پھینٹی لگانی ہے۔راولپنڈی ایکسپریس نے مزید کہا کہ پاکستان کا بولنگ اٹیک بھارت سے بہت بہتر ہے جبکہ بھارتی بولر ورون چکرورتھی کو  رضوان اس طرح سے کھیل رہا تھا کہ چکرورتھی کو چکر آگئے۔

انہوں نے کہا کہ میں نے بار بار کہا تھا، 24 اکتوبر یاد رکھنا، ہم بڑی بڑی باتیں نہیں کرتے، ہم بڑھکیں نہیں مارتے جبکہ بھارت نے کرکٹ کو مذاق بنا دیا ہے۔شعیب اختر  نے کہا کہ ہمیں نیوزی لینڈ پر زیادہ غصہ ہے، ہمیں تو کل کا میچ بھی جیتنا ہے،کل کے میچ میں بال صحیح طرح سے بلے پر نہیں آئے گی لیکن نیوزی لینڈ کی ٹیم  بھی اسپنرز کو اچھا نہیں کھیل سکتی۔انہوں نے کہا کہ میری  اللہ سے دعا ہے کہ  پاکستان کل ٹاس جیتے اور میچ بھی جیتے۔

شعیب اختر نے مزید کہا کہ بھارتی میڈیا میں محمد شامی کے خلاف بات سن کر بہت افسوس ہوا، اظہرالدین بھارتی ٹیم کے کپتان رہ چکے ہیں۔واضح رہے کہ آئی سی سی مینز ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ کے سپر 12 مرحلے میں پاکستان نے بھارت کو یکطرفہ مقابلے کے بعد 10 وکٹوں سے شکست دے ہے جس کے بعد بھارت میں غم و غصے کی لہر ہے۔

مزید :

T20 World cup -T20 Expert Opinion -