شوگر سکینڈل میں ریکوریوں کا سلسلہ خوش آئند ہے،گوہر نفیس

شوگر سکینڈل میں ریکوریوں کا سلسلہ خوش آئند ہے،گوہر نفیس

  

لاہور: (سپیشل رپورٹر) ڈائریکٹرر جنرل اینٹی کرپشن پنجاب گوہر نفیس کی زیرصدارت ڈائریکٹرز کانفرنس میں تمام ریجنل ڈائریکٹرز سمیت ڈائریکٹرز ہیڈ کوارٹر نے شرکت کی۔ اجلاس میں اینٹی کرپشن پنجاب میں زیر تفتیش میگا سکینڈلز پر پیش رفت سمیت 14نکاتی ایجنڈا زیر بحث آیا- شوگر کمیشن رپورٹ پر پیش رفت اور اب تک کی ریکوری ڈائریکٹرز کانفرنس کا ایجنڈا سر فہرست تھا۔ فوڈ ڈیپارٹمنٹ کے حوالہ سے آٹا سکینڈل پر جاری تحقیقات پر ریجنل ڈائریکٹرز کی جانب سے ڈی جی اینٹی کرپشن کو تفصیلی بریفنگ دی گئی۔ ڈائریکٹر جنرل اینٹی کرپشن پنجاب محمد گوہر نفیس نے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہا کہ شوگر سکینڈل میں ریکوریوں کا سلسلہ خوش آئند ہے۔ شوگر ملز مالکان کے خلاف گنے کے کاشتکار اب تک تین ہزار سے زائد شکایت اینٹی کرپشن کو جمع کرا چکے ہیں۔انہوں نے اس بات کا اعادہ بھی کیا کہ اگلا کرشنگ سیزن شروع ہونے سے پہلے کسانوں کو اربوں کے بقایاجات مل مالکان سے واپس دلائیں گے۔ انہوں نے ریجنل ڈائریکٹرز کو ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا کہ تمام ریجنل ڈائریکٹرز اینٹی کرپشن کی جانب سے واگزار کرائی گئی سرکاری زمینوں پر دوبارہ قبضہ کی تفصیلی رپورٹ ایک ہفتہ میں جمع کرائیں۔

 اور قبضہ و لینڈ مافیا کی پشت پناہی اور سرپرستی کرنے والے بااثر افراد کی لسٹ بنا کر ایک ہفتہ میں جمع کرائی جائے۔ انہوں نے کہا کہ ریاست کی رٹ اور قانون کی بالادستی کو چیلنج کرنے والے تمام عناصر کے خلاف بلا امتیاز کروائی جاری رکھیں گے۔انہوں نے کہا کہ تمام ریجنل ڈائریکٹرز اینٹی کرپشن میں خود احتسابی کے عمل کو یقینی بناہیں۔سرکاری اداروں کو کرپشن سے پاک کر کے عوام کا اعتماد بحال کرنا ہماری پہلی ترجیح ہونی چاہیے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -