طیاروں میں ایک سیٹ چھوڑ کر مسافر بٹھانے کی پالیسی ختم

  طیاروں میں ایک سیٹ چھوڑ کر مسافر بٹھانے کی پالیسی ختم

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر) سول ایوی ایشن نے کورونا احتیاطی تدابیر کے تحت طیاروں میں ایک سیٹ چھوڑ کر مسافر بٹھانے کی پالیسی ختم کردی۔تفصیلات کے مطابق بین الاقوامی سفر کرنے والے مسافروں کیلئے نئے ایس اوپیز جاری کر دیے گئے۔سی اے اے کے شعبہ ایئر ٹرانسپورٹ نے نوٹیفکیشن جاری کر دیا ہے۔نئی ایس او پیز کے تحت بین الاقوامی پروازوں میں ایک سیٹ چھوڑ کر مسافر بٹھانے کی پالیسی ختم کردی گئی ہے۔ نئی ایس اوپیز 24 ستمبرسیلاگوہونگے،31 دسمبرتک نافذ رہے گی۔کورونا کیٹگری اے میں شامل ممالک کے مسافر96گھنٹے قبل کا کورونا ٹیسٹ دکھانا ہوگا۔تمام ایئر پورٹس پر مسافروں کے لئے ہر قسم کے پروٹوکول پر پابندی برقرار رکھی گئی ہے، مسافروں کو صرف روانگی لاونج کے سامنے ڈراپ کیا جا سکے گا۔کیٹگریز اے میں شامل 38 ممالک سے آنے والے باشندوں کو کرونا ٹیسٹ سے استثنیٰ حاصل ہوگا۔استثنیٰ والے ممالک میں آسٹریلیا، کینڈا، چین، سعودی عرب، کیوبا، جرمنی، اٹلی جاپان، کینیا، ملائیشیا، نیوزی لینڈ، ناروے، سری لنکا، تھائی لینڈ، ترکی، سنگاپور، ملاوی، ساؤتھ کوریااورسویڈن شامل ہیں۔نوٹیفکیشن میں ہدایت دی گئی ہے کہ دوران پرواز مسافروں کے لئے کھانے پینے کی اشیاء کو باقاعدہ پیکنگ اور اختیاط کو مدنظر رکھیں، دوران پرواز طیارے کے واش روم کو استعمال کرنے کے بعد فضائی میزبان ڈس انفیکشن اسپرے لازمی کریں۔

مزید :

صفحہ آخر -