بہاولپورڈویژن، افسروں کو مہنگائی مافیاکی مانیٹرنگ کاحکم

بہاولپورڈویژن، افسروں کو مہنگائی مافیاکی مانیٹرنگ کاحکم

  

لودہراں، بہاول پور،حاصل پور، وہاڑی (بیورو رپورٹ،ڈسٹرکٹ رپورٹر،نمائندہ پاکستان، نمائندہ خصوصی) ڈپٹی کمشنر لودھراں عمران قریشی نے بااختیار کنٹرولر جنرل برائے(بقیہ نمبر34صفحہ6پر)

 پرائس، سپلائیز،خوردنی اشیا زیر دفعہ 6 پرائس کنٹرول و منافع خوری، ذخیرہ اندوزی ایکٹ 1997 (تجدیدشدہ 2006) کے تحت  اوپن مارکیٹ میں فراہم کی جانے والی اشیا خوردونوش کے نرخ مقرر کرکے حکم نامہ جاری کردیا ہے جس کا اطلاق ضلع بھرمیں اگلے حکم نامہ تک لاگو رہے گا۔جبکہ وزیر اعلی پنجاب سردارعثمان بزدار کی ہدایت پر ضلع بھر میں گراں فروشوں کے خلاف ٹھوس کارروائیاں جاری ہیں۔ ڈپٹی کمشنر عمران قریشی کی زیر نگرانی ضلعی پرائس کنٹرول مجسٹریٹس نے ماہ رواں میں ابتک گراں فروشی کے مرتکب867افراد کو 16لاکھ 15ہزار352 روپے سے زائد جرمانے عائد کیئے۔ضلعی پرائس کنٹرول مجسٹریٹس نے 48گراں فروشوں کے خلاف مقدمات بھی درج کروائے۔ضلعی انتظامیہ کی جانب سے جاری کردہ رپورٹ کے مطابق پرائس کنٹرول مجسٹریٹس نے مختلف مارکیٹوں و دوکانوں کے 22ہزار117 معائنے کیئے۔رپورٹ کے مطابق پرائس کنٹرول ایکٹ کی4ہزار641 خلاف ورزیوں پر 867افراد کو جرمانے عائد کیئے گئے جبکہ211افراد گرفتار کیا گیا۔

کمشنر بہاول پورڈویژن کیپٹن محمد ظفر اقبال نے پرائس کنٹرول کے حوالہ سے منعقدہ جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے تینوں اضلاع بہاول پور،بہاول نگراور رحیم یارخاں کے ڈپٹی کمشنرز، ڈی پی اوز اور انتظامی افسران کو ہدایت کی ہے کہ حکومت کے مقررکردہ نرخ 90/- روپے فی کلوگرام پر چینی کی بلا تعطل فراہمی کو یقینی بنایا جائے۔ انہوں نے ویڈیو لنک اجلاس کے دوران گراں فروشی اور ذخیرہ اندوزی میں ملوث افراد کے خلاف سخت کارروائی عمل میں لانے کی بھی ہدایت کی۔ کمشنر بہاول پورنے ہدایت کی کہ چینی کی بین الصوبائی ترسیل کی حوصلہ شکنی کے لیے چیک پوسٹوں کو فعال کیا جائے اور ہول سیلرز کے گوداموں کا بھی ریکارڈ مرتب کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ آٹا، دال، سبزیاں اور دیگر اشیائے ضروریہ کی مقررہ نرخ پر فراہمی میں کوئی رخنہ برداشت نہیں کیا جائے گا۔انہوں نے متعلقہ افسران کو ہدایت کی کہ شوگر ملز سے چینی کے سٹاک اور مارکیٹ میں فراہمی کے عمل کی مؤثر نگرانی کو یقینی بنایا جائے اور  تمام دکانوں پر نرخ نامے نمایاں جگہ پر آویزاں کرائے جائیں۔ انہوں نے کہا کہ ہر مارکیٹ میں متعلقہ پرائس کنٹرول مجسٹریٹس بارے معلومات اور شکایت کے لیے فون نمبر نمایاں جگہ پر درج کیا جائے۔ کمشنر بہاول پورنے کہا کہ سبزی منڈی میں نیلامی کے اوقات کار پر سختی سے عملدرآمدسمیت نیلامی کے عمل کو صاف شفاف بنایا جائے۔نیز افسران سبزی و فروٹ منڈی کی روزانہ کی بنیاد پر مانیٹرنگ کے عمل کو یقینی بنائیں۔ انہوں نے کہا کہ گوداموں اور کولڈ سٹوریج کی مؤثر مانیٹرنگ سمیت ذخیرہ اندوزوں کی حوصلہ شکنی کی جائے۔ انہوں نے اجلاس کے دوران ٹماٹر، پیاز اور آلو سمیت دیگر اشیائے ضروریہ کی مقررہ نرخ پر فراہمی کو یقینی بنانے کی بھی ہدایت کی۔اس موقع پرتینوں اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز، ڈسٹرکٹ پولیس افسران اور انتظامی افسران سمیت دیگر متعلقہ محکموں کے افسران موجود تھے۔کمشنر بہاولپور نے تینوں اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز کے اجلاس میں، چینی 90 روپے فی کلو بلا تعطل فراہمی کو یقینی بنانے کا حکم دیا ہے جبکہ دیگر خورد و نوش اشیا بھی ریٹ لسٹ کے مطابق فروخت کرنے اور گراں فروشی پر ڈپٹی کمشنرز کو اپنے اپنے اضلاع میں سختی سے نمٹنے کا کہا ہے سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ چینی کی مثال دوں جمعرات کو چینی کا تھیلہ غلہ منڈی سے 5185 روپے سے 5250 روپے کا سیل ہوا. اس حساب سے چینی 105 روپے فی کلو تھوک میں دستیاب ہے، اب دکاندار وہاں سے چینی خریدے گا، کسی سواری پر اپنی دکان تک لائے گا، پھر تھوڑی تھوڑی فروخت کرے گا، شاپر بیگ میں دے گا کچھ اپنا منافع بھی رکھنا ہوگا تو کمشنر بمعہ خرچہ دکاندار کم ازکم 20 روپے اپنی جیب سے کیسے ادا کرے گا کیا گورنمنٹ دکاندار کو سبسڈی دیتی ہے؟؟یہ ایک چینی کی مثال تھی، آٹا، گھی، دالیں و دیگر اشیا کی صورتحال بھی کچھ مختلف نہیں مہنگائی ٹولز استعمال کر کے کم نہیں ہوسکتی ہے مہنگائی کنٹرول کرنے کے لئے عملی اقدامات کرنے ہونگے جو کہ اب تک نظر نہیں آ رہے ہیں۔ڈپٹی کمشنر وہاڑی مبین الہی نے اشیاء خوردونوش کی قیمتوں کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا ہے نو ٹیفکیشن کے مطابق چاول باسمتی کرنل کچی 110روپے، چاول باسمتی کرنل پکی108روپے، چاول اری51روپے، دال چنا مو ٹی 127،دال چنا باریک 121روپے، دال مسور موٹی 160روپے، دال ماش (دھلی) چمن 218روپے،  دال ماش (بغیر دھلی ہوئی) 200روپے، دال مونگ دھلی ہوئی 128روپے،چنا سفید موٹا لوکل 173، چنا سفید باریک لوکل135روپے، سوجی، میدہ 68روپے،بیسن 130روپے، گورشت چھوٹا 800روپے، گوشت بڑا400روپے اور دہی 80روپے فی کلوگرام، دودھ فی لیٹر 75روپے،روٹی تندوری 100گرام 07روپے، نان تندوری 110گرام 10روپے کے حساب سے دکاندار فروخت کریں گے سبزی و پھل اور دیگر اشیاء مارکیٹ کمیٹی کے روز مرہ بنیاد پر جاری کردہ ریٹ کے مطابق فروخت کئے جائیں گے کوئی شخص یا دکاندار مقرر کر دہ نرخ سے زیاد ہ وصول نہیں کرے گا دکاندار ریٹ لسٹ نمایاں جگہ پر آویزاں کریں بصورت دیگر کاروائی عمل میں لائی جائے گی۔ ڈپٹی کمشنر مبین الہی نے مزید کہا کہ گراں فروشوں کے گرد شکنجہ سخت کیا جا رہا ہے جس کیلئے پرائس کنٹرول مجسٹریٹس متحرک ہو کر کام کر رہے ہیں روزانہ کی بنیاد پر اشیاء خوردونوش کی قیمتوں کو چیک کیا جا رہا ہے گزشتہ روز پرائس کنٹرول مجسٹریٹس نے 611چھاپے مارے اور 49گراں فروشوں ایک لاکھ 67ہزار روپے جرمانے کیے اور دو دکاندار کے خلاف ایف آئی کا اندراج کروایا گیا انہوں نے مزید کہا کہ عوام کو مقرر کر دہ نرخوں پر اشیاء خوردونوش کی فراہمی کیلئے ہر ممکن اقدامات بروئے کا ر لائے جا رہے ہیں تاکہ عوام کو ریلیف ملے سکے۔

مہنگائی

مزید :

ملتان صفحہ آخر -