کمشنر ڈیرہ کا تونسہ کا دورہ، ترقیاتی منصوبوں کاتفصیلی جائزہ

کمشنر ڈیرہ کا تونسہ کا دورہ، ترقیاتی منصوبوں کاتفصیلی جائزہ

  

ڈیرہ،تونسہ شریف(سٹی رپورٹر،نمائندہ پاکستان)جبکہ کمشنر سارہ اسلم نے ڈویژن بھر کی انتظامیہ کو ہدایت کی ہے کہ اشیائے خورد و نوش کی قیمتیں اعتدال میں لانے (بقیہ نمبر57صفحہ7پر)

کے لیے پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کو متحرک کرکے ناجائز منافع خوروں کو قانون کے دائرہ میں لایا اور ذخیرہ اندوزوں سے سٹاک برآمد کرایا جائے یہ بات انہوں نے پرائس کنٹرول ریویو کمیٹی کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی. اجلاس میں ایڈیشنل کمشنر خالد منظور،ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل قیصر عباس رند،اسسٹنٹ کمشنرز،ویڈیو لنک پر راجن پور،مظفر گڑھ،لیہ کے ڈپٹی کمشنرز اور متعلقہ پرائس کنٹرول مجسٹریٹس بھی موجود تھے۔کمشنر سارہ اسلم نے کہا کہ وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کے وژن کے تحت مہنگائی پر قابو پانے کیلئے تمام وسائل بروئے کار لائے جائیں جبکہ سخت اقدامات سے بھی گریز نہ کیا جائے،تمام ڈپٹی کمشنرز ہول سیل پوائنٹس پر بازار اور منڈی کی نسبت ارزاں نرخ پر اشیائے خوردونوش کی فراہمی کو یقینی بنائیں،حکومت پنجاب مہنگائی کو کنٹرول کرنے اور عام آدمی تک اس کے ثمرات پہنچانے کے لئے اشیائے خوردونوش اور اجناس پر خصوصی رعایت فراہم کر رہی ہے۔کمشنر سارہ اسلم نے کہا کہ منڈیوں میں نیلامی کے عمل کی باقاعدہ مانیٹرنگ کی جائے،کسی بھی آئٹم کی بے جاقیمت نہ بڑھنے دی جائے،تاجروں،پھڑیوں اور پرچون فروشوں کو حکومتی نرخوں پر اشیاء کی فروخت کا پابند بنایا جائے، بڑے ناجائز منافع خوروں پر ہاتھ ڈالا جائے،کسی کو بھی من مانیاں نہ کرنے دی جائیں،کمشنر سارہ اسلم نے کہا کہ ڈپٹی کمشنرز مہنگائی کو کنٹرول کرنے کے لئے افسران کے ہمراہ فیلڈ میں نکلیں،کسی کے ساتھ رعایت نہ برتی جائے اجلاس میں اشیائے خوردونوش کی قیمتوں اور انہیں کنٹرول میں رکھنے کے لئے لائحہ عمل پر بھی غور کیا گیا

کمشنرڈیرہ غازیخان ڈویژن سارہ اسلم نے تونسہ شریف کادورہ کیا. ترقیاتی منصوبوں کے معائنہ کے ساتھ ساتھ شہر میں صفائی، پرائس چیکنگ،ڈیجیٹل گرداوری اور دیگر معاملات چیک کیے. شہر میں صفائی کی ابتر صورتحال پر میونسپل کمیٹی کے افسران کو وارننگ دی. دال کے ناقص معیار پر دکانداروں کو بھاری جرمانے کے بھی احکامات جاری کیے. کمشنر ن لالو دائرہ شاہ حفاظتی فلڈ بند،ٹیوٹا انسٹیٹیوٹ،شاہ سلیمان سپورٹس کمپلیکس،ریسٹ ہاوس،تحصیل صدر ہسپتال،پناہ گاہ،کمال پارک،سٹی پارک،فیملی پارک،گرلز ہائیر سیکنڈری سکول،کمال پارک میں موبائل بس کنٹین اور دیگر ترقیاتی منصوبوں کا تفصیلی جائزہ لیاکمشنر سارہ اسلم نے ٹراما سنٹر تونسہ کا بھی اچانک معائنہ کیااورڈاکٹر اور پیرامیڈیکل سٹاف سے معلومات حاصل کیں.انہوں نے مریضوں کی عیادت کی اور لواحقین سے معلومات لیں. کمشنر نے تونسہ شہر میں صفائی اور میونسپل سروسز کے دیگر معاملات بھی چیک کئے انہوں نے مارکیٹوں میں اشیا خوردونوش کی پرائس چیکنگ بھی کی اورمعیاری دال موجود نہ ہونے پر دکاندار کو جرمانہ کرنے کے احکامات جاری کیے اوراسسٹنٹ کمشنر تونسہ محمد اسد چانڈیہ نے گرانفرشی پر جرمانہ کیا. کمشنر سارہ اسلم نے اسسٹنٹ کمشنر تونسہ کے آفس میں اجلاس کی صدارت کی جس میں میونسپل کمیٹی کے افسران اور عملہ نے شرکت کی. کمشنرنے کہاکہ تونسہ میں صفائی کے حوالے سے عوامی شکایات مل رہی ہیں،صفائی عملہ یونیفارم میں ملبوس رہے،صفائی عملہ کی دونوں شفٹوں میں حاضری چیک کی جائے،اسسٹنٹ کمشنر تونسہ صفائی معاملات کی نگرانی کریں، کمشنر نے کہاکہ کام نہ کرنے والے افسران فارغ ہوں گے،آج مہلت دی جارہی ہے،دوبارہ غفلت برداشت نہیں ہوگی،کمشنرنے اسسٹنٹ کمشنر کے ہمراہ ڈیجیٹل گردآوری کا عمل بھی چیک کیا.ڈائریکٹر ڈویلپمنٹ عبید الرشید نے منصوبوں کی پیشرفت اور متعلقہ امور پر بریفنگ دی۔ڈی جی پی ایچ اے و ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر فنانس و پلاننگ سیف الرحمن،سپرنٹنڈنگ انجینئرز محمد وقار،چوہدری ظفر حسین،اسسٹنٹ کمشنر تونسہ محمد اسد چانڈیہ، اسسٹنٹ ڈائریکٹر ڈویلپمنٹ محمد عدیل،ایگزیکٹو انجینئرز محمد وقاص،ظفر بودلہ اور دیگر ہمراہ تھے۔کمشنر سارہ اسلم نے کہا کہ ترقیاتی منصوبوں میں مٹیریل کے معیار پر ہرگز سمجھوتہ نہیں کیا جائیگا۔ٹائم لائن پر عملدرآمد اور منصوبوں کی بروقت تکمیل کیلئے افرادی قوت بڑھائی جائے۔ہر منصوبہ کی موجودہ صورتحال کا تصویری ریکارڈ مرتب کیا جائے۔۔تونسہ میں خواتین کی فنی کلاسز کیلئے پروجیکٹ بنایا جائے. کمشنر سارہ اسلم کو بریفنگ میں بتایا گیا کہ ریسٹ ہاس پر چار کروڑ 70 لاکھ،ٹیکنیکل ٹریننگ انسٹیٹیوٹ پر 21 کروڑ 20 لاکھ،تونسہ شہر کے ایگزٹ پوائنٹ پر 12 کروڑ،لالو دائرہ شاہ سپر پر ایک ارب ساڑھے چار کروڑ،تحصیل صدر ہسپتال کی اپ گریڈیشن پر ایک ارب 34 کروڑ،گرلز ہائیر سیکنڈری میں اضافی کلاس رومز اور سہولیات کی فراہمی پر نو کروڑ روپے خرچ کئے جارہے ہیں۔کمال پارک،سٹی پارک اور پبلک پارک پر گیارہ کروڑ روپے،پناہ گاہ پر 13 کروڑ روپے خرچ کئے گئے۔دو گاوں لالو اور دائرہ شاہ کو سیلابی ریلے سے بچانے کیلئے ماڈل سٹڈی کے بعد سپر کی منظوری دی گئی ہے۔تونسہ شہر کو بھی محفوظ کرنے کیلئے دونوں کناروں پر سٹون پچنگ کی جائے گی.فلڈ بند کی اونچائی 25 فٹ رکھی گئی ہے لالو دائرہ شاہ سپر پر تین پیکجز میں کام کیا جارہا ہے عمارتوں اور قیمتی رقبہ بچانے کیلئے سنگھڑ نالہ پر 39500 فٹ سپر کی تعمیر شروع کردی گئی اوردس ہزار فٹ تک سپر کی تعمیر مکمل کرلی گئی،سپر کی تعمیر اور رقبہ کی خریداری پر ایک ارب ساڑھے چار کروڑ روپے خرچ ہوں گے،کمشنر نے سپر منصوبہ کو  دسمبر تک مکمل کرنے کی ہدایت کی.تونسہ تحصیل صدر ہسپتال کو ایک سو سے 190 بیڈ تک توسیع کی جارہی ہے ہسپتال کے توسیعی منصوبہ پر ایک ارب 34 کروڑ روپے خرچ کئے جارہے ہیں ٹی ایچ کیو ہسپتال تونسہ کی اپ گریڈیشن کا  منصوبہ آئندہ سال اپریل میں مکمل ہوگاگرلز ہائیر سکینڈری سکول تونسہ میں اضافی کلاس رومز کی تعمیر  پر 9 کروڑ روپے خرچ ہوں گے پناہ گاہ تونسہ کو فنکشنل کردیا گیا، تعمیر پر 13 کروڑ روپے خرچ ہوئے۔تونسہ کی ایگزٹ پوائنٹ کی بیوٹیفکیش پر بارہ کروڑ روپے خرچ ہوں گے۔

ملاقاتیں 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -